آسٹریلیا: شین واٹسن نائب کپتانی سے علیحدہ

واٹسن
Image caption شین واٹسن آئی پی ایل میں شرکت کر رہے ہیں

آسٹریلیا کرکٹ ٹیم کے نائب کپتان شین واٹسن نے اپنی توجہ کھیل پر مرکوز کرنے کے باعث عہدہ چھوڑنے کا اعلان کیا ہے۔

انھوں نے کرکٹ کے تینوں فارمیٹ یعنی ٹیسٹ، ایک روزہ اور ٹی ٹوئنٹی میں نائب کپتانی سے سبکدوشی اختیار کرنے کا اعلان کیا ہے۔

واضح رہے کہ انھوں نے انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان کھیلی جانے والی ایشز سیریز سے قبل یہ فیصلہ لیا ہے۔ ایشز شروع ہونے میں اب تین ماہ سے بھی کم وقت بچا ہے۔

31 سالہ آل راؤنڈر نے کہا کہ انھوں نے یہ فیصلہ اپنے کھیل پر مزید توجہ مرکوز کرنے اور اس میں بہتری لانے کے لیے کیا ہے۔

انھوں نے کہا ’میرے خیال میں یہ میرے اور میری ٹیم دونوں کے لیے تبدیلی لانے کا صحیح وقت ہے۔‘

واٹسن نے بھارت کے خلاف سیریز کے چوتھے اور آخری میچ میں کپتانی کے فرائض انجام دیئے تھے۔ اس سیریز میں آسٹریلیا اپنے چاروں میچ ہار گئی تھی اور یہ بھارت کے خلاف اس کی شرمناک ترین شکست تھی۔

بھارت کے خلاف سیریز میں اچھی کارکردگی نہ کر پانے پر واٹسن کے فارم پر سوالیہ نشان لگنے لگے تھے۔ اس سیریز میں انھوں نے 5۔16 کی اوسط سے رنز بنائے اور ان کا کسی بھی اننگز میں سب سے زیادہ 28 رنز رہے حالانکہ بلے بازی پر توجہ مرکوز کرنے کے لیے انھوں نے گیند بازی کی خدمات بھی انجام نہیں دی تھی۔

انھوں نے کہا کہ ’میں آسٹریلیا کے لیے اپنے تئیں بہترین ٹیسٹ کھلاڑی بنا چاہتا ہوں۔ اور نائب کپتانی کے عہدہ چھوڑ کر میں رنز بنانے اور وکٹز لینے پر اپنی توجہ مرکوز کر سکوں گا اور وہ سب کر سکوں گا جس سے ٹیم کو کامیابی حاصل کرنے میں مدد ملے۔‘

وہ ان چار کھلاڑیوں میں شامل تھے جنہیں کوچ میکی آرتھر کو ٹیم کے بارے میں حمکت عملی پیش کرنے میں ناکام رہنے کی صورت میں تیسرے ٹیسٹ میچ سے نکال دیا گیا تھا۔

واٹسن کو مارچ 2011 میں آسٹریلیا کا نائب کپتان نامزد کیا گیا تھا۔ انھوں نے اکتوبر 2010 سےکوئی سنچری نہیں بنائی ہے۔

واٹسن فی الحال بھارت میں جاری آئی پی ایل چھ میں راجستھان رایلز کی جانب سے میچوں میں حصہ لے رہے ہیں۔

اسی بارے میں