برازیل: ساؤپاؤلو شہر کو فیفا کی تنبیہ

Image caption برازیل پر ورلڈ کپ کے معاملات چلانے کے حوالے سے شدید تنقید کی جا رہی ہے جہاں کئی معاملات میں شدید تاخیر سامنے آ رہی ہے

فٹبال کے عالمی نگران ادارے فیفا نے برازیل کو خبردار کیا ہے کہ اس کے شہر ساؤپاؤلو سے آئندہ فٹبال ورلڈ کپ کے میچز منعقد کرنے کا حق واپس لیا جا سکتا ہے۔

برازیل کے شہر ساؤپاؤلو میں دو ہزار چودہ میں منعقد ہونے والے فٹبال ورلڈ کپ کا افتتاحی میچ بھی منعقد کیے جانے کا منصوبہ ہے۔

فیفا نے برازیل کے اس شہر میں تعمیراتی کاموں میں تاخیر کی وجہ سے برازیل کو متنبہ کیا ہے۔

فیفا کے سیکرٹری جنرل جیروم ویلکی نے کہا ہے کہ وہ سٹیڈیمز کی تعمیر میں کسی قسم کی بھی تاخیر کو تسلیم نہیں کریں گے جنہیں دسمبر میں مکمل کیا جانا طے پایا ہوا ہے۔

اتاکیراؤ سٹیڈیم مقامی فٹبال ٹیم کی ملکیت ہے نے اس بات پر تشویش ظاہر کی تھی کہ فیفا کو پتا ہے کہ یہ سٹیڈیم فروری تک مکمل نہیں ہو پائے گا کیونکہ اس میں افسر شاہی کی جانب سے تاخیری حربے استعمال کیے گئے تھے۔

Image caption برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو کا فٹبال سٹیڈیم تکمیل کے آخری مراحل میں

برازیل پر ورلڈ کپ کے معاملات چلانے کے حوالے سے شدید تنقید کی جا رہی ہے جہاں کئی معاملات میں شدید تاخیر سامنے آ رہی ہے۔

جیروم ویلکی نے کہا کہ ’ہم سب کچھ بدل سکتے ہیں اس وقت تک جب تک پہلا ٹکٹ فروخت کے لیے نہیں پیش کیا جاتا۔ میں یہ کہنا چاہتا ہوں کہ ہم میچز کا پورا شیڈیول بدل سکتے ہیں یکم اگست تک۔ ہمیں اس وقت تک آزادی ہے کچھ ہفتوں یا چلیں کچھ مہینوں تک کے لیے جب تک ہم ساؤپاؤلو شہر والوں کے ساتھ بیٹھیں اور ان سے بات کریں کہ ان کے سٹیڈیم کے حوالے سے جو صورتحال ہے۔‘

اسی بارے میں