گروناتھ تحقیقات مکمل ہونے تک معطل

Image caption گروناتھ کو چنئی سپر کنگز کے معاملات سے دور رہنا ہوگا: کرکٹ بورڈ

بھارتی کرکٹ بورڈ نے انڈین پریمیئر لیگ میں شامل ٹیم چنئی سپر کنگز کے چیف ایگزیکٹو افسر اور کرکٹ بورڈ کے صدر این سری نواسن کے داماد گروناتھ میپّن کو سپاٹ فکسنگ سکینڈل میں ان کے کردار پر تحقیقات مکمل ہونے تک معطل کر دیا ہے۔

ممبئی پولیس نے میپّن کو جمعہ کو آئی پی ایل کے میچوں پر سٹہ کھیلنے کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔

بی سی سی آئی کے سیکرٹری سنجے جگدیل نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ’بورڈ نے چنئی سپر کنگز کی ٹیم انتظامیہ کے رکن گروناتھ میّپن کو حراست میں لیے جانے کا نوٹس لیا ہے اور ٹیم کی انتظامیہ کے رکن کی حیثیت سے گروناتھ میّپن پر آئی پی ایل کے قواعد و ضوابط اور بی سی سی آئی کے انسدادِ رشوت ستانی کوڈ کا اطلاق ہوتا ہے۔‘

بیان میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ’تحقیقات کی تکمیل اور بی سی سی آئی یا آئی پی ایل کی انضابطی کمیٹیوں کی سماعت تک گروناتھ میّپن کو کرکٹ کے کھیل سے عمومی طور پر اور چنئی سپر کنگز کے معاملات سے خصوصاً معطل کر دیا گیا ہے۔‘

خیال رہے کہ چنئی سپر کنگز اتوار کو آئی پی ایل کے چھٹے سیزن کے فائنل میں ممبئی انڈینز کا مقابلہ کر رہی ہے۔

سنجے جگدیل نے یہ بھی کہا کہ بورڈ کے اہلکاروں نے ممبئی پولیس سے بھی ملاقاتیں کی ہیں اور تحقیقات میں ہر ممکن تعاون کی پیشکش کی ہے۔

ادھر داماد کی سٹے بازی کے الزام میں گرفتاری کے بعد بی سی سی آئی کے صدر این سری نواسن پر مستعفی ہونے کے لیے دباؤ میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔

بھارتی کرکٹ میں سپاٹ فکسنگ سکینڈل کے سامنے آنے کے بعد اب تک دہلی اور ممبئی کی پولیس گروناتھ ميئپن، ٹیسٹ کرکٹ سری سانت سمیت آئی پی ایل کی ٹیم راجستھان رائلز کے تین کرکٹرز اور اداکار وندو دارا سنگھ سمیت متعدد افراد کو گرفتار کر چکی ہے۔

اسی بارے میں