برازیلی فٹ بالر نیمر کی بارسلونا آمد

Image caption اکیس سالہ نیمر کو دنیا کا بہترین نوجوان فٹ بالر کے طور پر پہچانا جاتا ہے

برازیل کے نوجوان کھلاڑی سٹرائیکر نیمر نے سپین کے فٹ بال کلب بارسلونا کے ساتھ پانچ سال کا معاہدہ کر لیا ہے۔ اب وہ بارسلونا کلب میں لیونل میسی کے ہمراہ کھیلے گا۔

بارسلونا کلب کی جانب سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہاگیا ہے کہ ایف سی بارسلونا اور برازیل کے کلب سینٹوس کے مابین نیمر کی ٹرانسفر کا معاہدہ طے پا گیا ہے۔

اکیس سالہ نیمر کو دنیا کا بہترین نوجوان فٹ بالر کے طور پر پہچانا جاتا ہے۔

نیمر نے بارسلونا کلب کو جوائن کرنے کا اعلان اپنے ٹوئٹر اکاونٹ اور انسٹا گرام پر اپنے پیغام میں کیا۔

اس سے پہلے سینٹوس کلب نے کہا تھا کہ انہیں بارسلونا کلب اور ریل میڈرڈ کی طرف سے کی جانی والی پیشکش قبول ہیں اور اب یہ نیمر پر منحصر ہے کہ وہ کونسا کلب جوائن کرنا چاہتے ہیں۔ نیمر نے بارسلونا کلب کا انتخاب کیا ہے۔

نیمر نے پرتگالی زبان میں اپنے بیان میں کہا ہے کہ سینٹوس کلب جہاں انہوں نے نو سال تک فٹ بال کھیلی ہے ہمیشہ ان کے دل میں ہمیشہ رہے گا۔

انہوں نے کہا کہ وہ اپنے پرانے کلب کو چھوڑنے پر غمگین اور نئے کلب کو جوائن کرنے پر خوش ہیں۔ انہوں نے لکھا ’خدا میرے انتخاب کو قبول کرے لیکن سینٹوس کلب ہمیشہ میرے دل میں رہے گا۔‘

نیمر کے بارے عظیم کھلاڑی پیلے کا کہنا ہے کہ وہ دنیا کا بہترین کھلاڑی بننے کی صلاحیت رکھتا ہے اور شاید وہ لیونل میسی سے بھی بڑا کھلاڑی ہے۔ فٹ بال کی دنیا میں کئی برسوں سے یہ قیاس آرائیاں ہو رہی تھیں کہ یورپ کا کون سا کلب نیمر کو سائن کرنے میں کامیاب ہوگا۔

نیمر نے برازیلی کلب سینٹوس کو دوبارہ اس مقام پر پہنچا دیا ہے جہاں وہ عظیم کھلاڑی پیلے کے زمانے میں تھا۔ نیمر نے سینٹوس کو دو ہزار دس میں برازیل کپ، دو ہزار گیارہ میں لبرٹاڈورز اور مسلسل تین ساؤ پالو سٹیٹ چیمپئن شپ جتائی ہیں۔

سینٹو کلب نے اپنے بیان میں کہا کہ انہوں نے اپنی پوری کوشش کی ہے کہ وہ نیمر کو برازیل میں رکھ سکیں۔کلب نے کہا کہ انہوں نے دو ہزار چودہ میں ان کے کنٹریکٹ کی مدت ختم ہونے کے بعد نئے کنٹریکٹ کی بھی آفر کی تھی۔ کلب نے کہا کہ کہ وہ کھلاڑی کو بیرونی ممالک کے کلبوں کی طرف سے کی جانی والی پیشکشوں کا مقابلہ نہیں کر سکتے۔