لارڈز ٹیسٹ: انگلینڈ کی برتری 566 رنز

Image caption دوسری اننگز میں جوے روٹ نے نصف سنچری بنائی ہے

لارڈز میں ایشز سیریز کے دوسرے ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن کھیل کے اختتام پر انگلینڈ نے دوسری اننگز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 333 رنز بنا لیے۔

انگلینڈ کو آسٹریلیا کے خلاف 566 رنز کی برتری حاصل ہے اور دوسری اننگز میں اس کی 5 وکٹیں باقی ہیں۔

تیسرے دن کھیل کے اختتام پر جو روٹ اور جونی بیر سٹو کریز پر موجود تھے اور دونوں نے بالترتیب 178 اور 11 رنز بنائے تھے۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

سنیچر کو جب کھیل شروع ہوا تو جو روٹ اور نائٹ واچ مین ٹم بریسنن نے اننگز شروع کی اور آسٹریلوی بولرز کو پہلے سیشن میں مزید کوئی کامیابی حاصل نہیں کرنے دی۔

میچ کے تیسرے دن آسٹریلیا کی ٹیم صرف 2 وکٹیں حاصل کرنے میں کامیاب رہی۔

آسٹریلیا کی جانب سے دوسری اننگز میں پیٹر سڈل نے تین جبکہ جیمز پیٹنسن اور سٹیون سمتھ نے ایک ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

میچ کے دوسرے دن انگلینڈ نے اپنی پہلی اننگز میں 361 رنز بنائے تھے جس کے جواب میں آسٹریلیا کی پوری ٹیم پہلی اننگز میں صرف 128 رنز بنا کر ڈھیر ہو گئی تھی اور انگلینڈ کو آسٹریلیا کے خلاف 233 رنز کی برتری حاصل ہوئی تھی۔

انگلینڈ کی اس عمدہ کارکردگی میں اہم کردار گریم سوان نے پانچ وکٹیں لے کر ادا کیا تھا۔ ان کے علاوہ ٹم بریسنن نے دو جبکہ جیمز اینڈرسن اور کرس براڈ نے ایک ایک وکٹ حاصل کی تھی۔

پانچ ٹیسٹ میچوں پر مشتمل سیریز میں انگلینڈ کو آسٹریلیا کے خلاف ایک صفر کی برتری حاصل ہے۔

ناٹنگھم میں کھیلے جانے والے پہلے ایشز ٹیسٹ میں انگلینڈ نے آسٹریلیا کو چودہ رنز سے شکست دی تھی۔

اسی بارے میں