انگلستان نے فٹ بال ورلڈ کپ 2014 کے لیے کوالیفائی کر لیا

Image caption اس میچ میں پولینڈ کو شکست دے کر انگلستان نے برازیل کے لیے ٹکٹ کٹا لیا ہے

انگلستان نے لندن میں ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد پولینڈ کو دو گول سے ہرا کر اگلے برس برازیل میں ہونے والے فٹ بال ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کر لیا ہے۔

انگلش ٹیم کو گروپ ایچ میں اول نمبر پر آنے کے لیے اس میچ میں تین پوائنٹس کی ضرورت تھی۔ تاہم اس دوران انھیں کئی اعصاب شکن لمحات سے گزرنا پڑا۔

فٹ بال ورلڈ کپ کے لیے ٹکٹوں کی فروخت شروع

وزیرِاعظم ڈیوڈ کیمرون نے ٹیم کی تعریف کرتے ہوئے ٹویٹ کیا: ’مجھے فخر ہے انگلستان نے برازیل کے ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کر لیا ہے۔‘

وین رونی نے گذشتہ جمعے کو مونٹی نیگرو کے خلاف کھیلے گئے میچ کی طرح اس بار بھی پہلا گول سکور کیا۔ اس بار انھوں نے ہاف ٹائم سے چار منٹ قبل لیٹن بینز کے پاس کو سر کی جنبش سے نیٹ میں پہنچا دیا۔

پولینڈ کی ٹیم کی حمایت کے لیے سٹیڈیم میں 20 ہزار تماشائی موجود تھے۔ اسی سے شہ پا کر انھوں نے انگلستان کے گول پر کئی حملے کیے، تاہم کپتان سٹیفن جیرارڈ نے میچ کے اختتام سے صرف دو منٹ قبل گول کر کے میچ اپنے نام کروا لیا۔

انگلستان کے مینیجر ہوجسن نے بھاگ کر میدان میں اپنے کھلاڑیوں کو گلے لگا لیا۔

انگلستان کو اپنے آخری دو میچوں میں چھ پوائنٹوں کی ضرورت تھی، جس کے بعد انھوں نے جارحانہ کھیل شروع کر دیا، حالانکہ اس سے قبل کے میچوں میں ٹیم خاصے محتاط طریقے سے کھیلتی تھی۔

اب وہ برازیل میں ہونے والے فٹ بال کی تاریخ کے سب سے بڑے کارنیوال میں شرکت کر سکیں گے۔ اس دوران انھیں اپنے حمایتیوں کی بڑے پیمانے پر حمایت حاصل ہو گی کیوں کہ کوالیفیکیشن سے پہلے ہی 97 ہزار لوگوں نے برازیل جانے کے لیے درخواستیں جمع کروا رکھی تھیں۔

برازیل میں انگلستان جیت کے لیے مضبوط امیدوار نہیں ہے، لیکن اگر ہوجسن آخری دو میچوں میں بننے والا جوش برقرار رکھ سکیں تو وہ ہر قسم کی امید رکھ سکتے ہیں۔

منگل کے میچ میں انگلستان کی ٹیم نے زیادہ انحصار اپنے دو تجربہ کار ترین کھلاڑیوں یعنی رونی اور جیرارڈ پر کیا۔ ان کے علاوہ اینڈروس ٹاؤنز اینڈ اور لیٹن بینز نے بھی عمدہ کھیل کا مظاہرہ کیا۔

اسی بارے میں