پاکستانی ٹیم کو بنگلہ دیش کے لیے کلیئرنس مل گئی

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption پاکستانی ٹیم کو بنگلہ دیش میں قیام کے دوران سکیورٹی کے سلسلے میں غیرمعمولی طور پر محتاط رہنے کی تاکید بھی کی گئی ہے

پاکستانی کرکٹ ٹیم کو ایشیا کپ اور آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی میں شرکت کے لیے بنگلہ دیش جانے کی کلیئرنس مل گئی ہے۔

وزارت خارجہ نے اس بارے میں پاکستان کرکٹ بورڈ کو مطلع کردیا ہے۔

’ضمانت دیں ورنہ ورلڈ ٹی ٹوئنٹی منتقل کریں‘

یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ 22 فروری کو پاکستانی ٹیم کی ڈھاکہ روانگی سے دو روز قبل پاکستان کرکٹ بورڈ اپنا سکیورٹی افسر صورتِ حال کا جائزہ لینے کے لیے بنگلہ دیش بھیجے گا۔

پاکستانی ٹیم کو بنگلہ دیش میں قیام کے دوران سکیورٹی کے سلسلے میں غیرمعمولی طور پر محتاط رہنے کی تاکید بھی کی گئی ہے۔

یاد رہے کہ بنگلہ دیش میں جماعتِ اسلامی کے رہنما عبدالقادر ملاّ کو سزائے موت دیے جانے پر پاکستانی حکومت کے سخت ردعمل کے جواب میں بنگلہ دیش میں پاکستان مخالف مظاہرے ہوئے تھے جس کے بعد پاکستانی ٹیم کی ایشیا کپ اور ورلڈ ٹی ٹوئنٹی میں شرکت حکومت کی اجازت سے مشروط کردی گئی تھی۔

چار فروری کو پاکستان کرکٹ بورڈ کے سابق چیئرمین ذکا اشرف نے امورِ خارجہ کے مشیر سرتاج عزیز سے ملاقات کی تھی جس میں انہیں بتایا گیا تھا کہ اس ضمن میں سمری وزیرِ اعظم کو بھیجی جا رہی ہے۔

ایشیا کپ 25 فروری سے آٹھ مارچ تک کھیلا جائے گا جبکہ آئی سی سی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی 16 مارچ سے چھ اپریل تک ہوگا۔

اسی بارے میں