پرچموں پر پابندی، بنگلہ دیش کا یو ٹرن

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل ( آئی سی سی ) نے پرچموں پر پابندی کے معاملے پر بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کی وضاحت میڈیا کو جاری کی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ نے کسی بھی موقع پر شائقین پر سٹیڈیم میں پرچم لانے پر پابندی عائد نہیں کی اور نہ ہی شائقین کی جانب سے پرچم سٹیڈیم لانے پر اسے کسی قسم کے تحفظات ہیں تاہم یہ پرچم مخصوص سائز کے ہونے چاہئیں جن کی اجازت ہے۔

تاہم بین الاقوامی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی نے آئی سی سی سے استفسار کیا ہے کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کی اس تازہ ترین وضاحت کا کیا یہ مطلب ہے؟ کیا اس وضاحت کے بعد بنگلہ دیشی شائقین غیرملکی ٹیموں کے پرچم سٹیڈیم میں لا سکتے ہیں؟

واضح رہے کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ نے بنگلہ دیشی شائقین سے کہا تھا کہ وہ غیرملکی پرچم سٹیڈیم میں نہیں لاسکتے۔اس بارے میں بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کے ڈائریکٹر اسماعیل حیدر نے مقامی میڈیا کو بتایا تھا کہ یہ قدم سکیورٹی کے پیش نظر اٹھایا گیا ہے۔لیکن اب بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کی تازہ ترین وضاحت اس کے سابقہ موقف کے بالکل برعکس ہے۔

یاد رہے کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کی جانب سے اپنے شائقین کو غیرملکی پرچموں کے ساتھ سٹیڈیم میں داخلے سے روکنے کے فیصلے پر آئی سی سی نے بھی ردعمل ظاہرکیا تھا اور اس معاملے پر بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ سے وضاحت طلب کی تھی۔

آئی سی سی کا کہنا تھا کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کا یہ قدم اس مقصد کے قطعاً برعکس ہے جس کے لیے آئی سی سی اس عالمی ایونٹ کے فروغ کے لیے کام کر رہی ہے۔