گیرتھ بیل رونالڈو کی جگہ لینے کے لیے تیار

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ماہرین کے مطابق گیرتھ بیل اب مکمل کھلاڑی بن چکے ہیں

سپین کے مشہور فٹبال کلب ریال میڈرڈ نے بدھ کے روز اپنے روایتی حریف بارسلونا کلب کو فٹبال لیگ کوپا ڈیل رے کپ کے فائنل میں ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد شکست دے کر یہ کپ انیسویں بار جیت لیا۔

ریال میڈرڈ کی جیت میں برطانوی کھلاڑی گیرتھ بیل نے اہم کردار ادا کیا۔گیرتھ بیل نے آخری لمحات میں ایک انتہائی شاندار گول کر کے اپنی ٹیم کی فتح کو یقینی بنا دیا۔

24 سالہ بیل، جو گذشتہ سال ستمبر میں ایک سو ملین ڈالر کے عوض ریال میڈرڈ ٹرانسفر ہوئے تھے اور یہ ٹرانسفر فیس ایک ورلڈ ریکارڈ ہے۔

عمومًا لیفٹ ونگ اور لیفٹ بیک کی پوزیشن پر کھیلنے والے بیل کا یہ گول ایک ایسے لمحے پر آیا ہے جب ان کے ساتھی رونالڈو زخمی ہونے کی وجہ سے اس میچ میں حصہ نہیں لے رہے تھے۔

رونالڈو، جنھیں ماہرین دنیا کے چند ایک بہترین فٹبالروں میں سے ایک گردانتے ہیں، اگلے سال 30 برس کے ہوجائیں گے۔ماہرین کے خیال میں ریال میڈرڈ کو گیرتھ بیل کی شکل میں رونالڈو کا متبادل مل گیا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption رونالڈو اگلے سال 30 برس کے ہوجائیں گے

ماہرین کا خیال ہے کہ بیل اب ایک بھرپور کھلاڑی کا روپ دھار چکے ہیں اور وہ رونالڈو کی غیر موجودگی میں میڈرڈ کو ان کی کمی محسوس نہیں ہونے دیں گے۔

دونوں کھلاڑیوں کا شمار ریال میڈرڈ کے ’گیلیکٹیکوس‘ میں ہوتا ہے۔ یہ وہ کھلاڑی ہیں جو نہ صرف انتہائی عالیٰ درجے کے کھلاڑی ہیں اور انھیں صرف بھاری معاوضے کے تحت حاصل کیا جاتا ہے۔

گیرتھ بیل کی عمر 24 برس ہے اور ان کے کریئر کا بیشتر حصہ ابھی باقی ہے۔ اتنی کم عمری میں اتنی پھرتی اور تیزی دکھانے والے بیل میڈرڈ کے لیے نہ صرف رونالڈو کا آئینہ ہیں بلکہ ان کے مشکل سوالوں کا جواب بھی ہیں۔

اسی بارے میں