برونا ’خوش بختی‘ کی علامت، شکیرا کا جشن

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption چلی کے خلاف میچ میں برونا کے چہرے کے بدلتے رنگ کے ساتھ کیمرہ بھی ان کے پیچھے لگا تھا

سنیچر کو جہاں میدان میں برازیل کے گول کیپر ژولیو سیزر چمکے اور انھوں نے اپنی ٹیم کو کوارٹرفائنلز میں پہنچانے میں اہم کردار ادا کیا وہیں میدان کے باہر کوئی اور تھا جو لوگوں کی توجہ کا مرکز بنا ہوا تھا۔

برازیل نے پنالٹی شوٹ آؤٹ پر چلی کو دو کے مقابلے تین گول سے شکست دے کر کامیابی حاصل کی۔ اس سے پہلے میچ اضافی وقت کے اختتام تک میچ ایک ایک گول سے برابر تھا۔

چلی نے سخت مقابلہ کیا اور برازیل پر زبردست دباؤ نظر آيا۔ برازیل کے سٹار کھلاڑی نیمار کی گرل فرینڈ برونا مارکوئزین اپنی گھبراہٹ نہ چھپا سکیں اور کئی موقعوں پر رو پڑیں۔

برازیل کے حکام اور کھلاڑیوں کی بیگمات اور گرل فرینڈز کے ساتھ ایک وی آئی پی باکس میں جلوہ گر اداکارہ اور موڈل برونا ان دنوں ’دا فیملی‘ نامی سیريل میں اداکاری کر رہی ہیں اور میچ کے دوران بار بار کیمرہ ان پر جا رہا تھا۔

برازیل کے کھیل کے موڈ کے حساب سے جب بھی برونا ہنستیں، مسکراتیں یا رو پڑتیں تو کیمرہ ان کا تعاقب کرتا رہتا اور ٹی وی کمنٹیٹروں نے بھی ان کے جذبات کے بارے بہت باتیں کیں ’برونا برازیل کی ٹیم کے لیے نیک شگون ثابت ہو رہی ہیں۔‘

کولمبیا کی جیت اور شکیرا کی پارٹی

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption جنوبی افریقہ میں ہونے والے گذشتہ ورلڈ کپ میں تھیم سانگ واکا واکا شکیرا نے گایا تھا جو بہت مقبول ہوا

کولمبیا کی معروف گلوکارہ شکیرا نے اپنی ٹیم کی جیت کا جشن منانے کے لیے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ کا سہارا لیا۔ کولمبیا نے یوروگوئے کو صفر کے مقابلے دو گول سے شکست دی۔

شکیرا نے پوری ٹیم کی تعریف کے بجائے جیمز روڈریگیز کی تعریف کی جنھوں نے دونوں گول کیے۔ اس کے علاوہ انھوں نے گول کيپر اوسپینا کی بھی تعریف کی۔ انھوں نے لکھا ’ہم لوگ کوارٹر فائنل میں پہنچ گئے۔ جیمز آپ کا شکریہ۔ یہ ابھی تک ورلڈ کپ کا بہترین گول تھا۔ اوسپینا بس قابل دید تھے۔‘

انھوں نے یہ بھی لکھا کہ وہ کس طرح اس جیت کا جشن منانے کا ارادہ رکھتی ہیں۔

یہ کسی ورلڈ کپ میں کولمبیا کی بہترین کارکردگی ہے۔ ایسے میں کوئی جائے حیرت نہیں کہ شکیرا اس جیت کا جشن پارٹی اور نغمے کے ساتھ کر رہی ہیں۔

گذشتہ ورلڈ کپ کا تھیم سانگ ’واکا واکا‘ شکیرا نے ہی گایا تھا اور پرفارم بھی کیا تھا۔

سواریس ! اک تم ہی نہیں تنہا۔۔۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption یوروگوے کے کھلاڑی سواریس پر دانت کاٹنے کے جرم میں نو میچوں کی پابندی لگائی گئی ہے۔

گذشتہ ہفتے ساؤ پالو میں انگلینڈ اور یوروگوے کے درمیان کھیلے جانے والے میچ کے دوران انگلینڈ کے ایک مداح نے دوسرے فٹبال پرستار کا بائیں کان چبا ڈالا۔ اس دانت کاٹنے والے شخص کو برطانیہ اور برازیل کے حکام تلاش کر رہے ہیں۔

یہ واقعہ ارینا کورنتھیئنز میں پیش آیا۔ ورلڈ کپ کے لیے برازیل آنے والے برطانیہ کے پولیس کمشنر نے کہا ہے کہ ایک ویڈیو میں اس حادثے کو محفوظ کر لیا گیا ہے۔ انھوں نے کہا ’اس حملے کے فورا بعد ہم اس کے شکار شخص کو مدد فراہم کرنے کے لیے رابطے میں تھے۔‘

اس حملے کے ایک دن بعد اس شخص نے مقامی پولیس سٹیشن میں باقاعدہ شکایت درج کی۔ مقامی پولیس کے ترجمان نےبتایا ’بہت سے عینی شاہدین نے اس کی گواہی دی اور اس واقعے کو بیان کیا لیکن وہ مشتبہ شخص کی نشاندہی کرنے سے قاصر رہے۔‘

پولیس اس حملہ آور کو تلاش کر رہی ہے۔

’برازیل کے باشندے ہمیں کیوں ناپسند کرتے ہیں؟‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP GETTY
Image caption یونان کی ٹیم کے کوچ کی شکایت برازیل کے لوگوں سے ہے

گریس یعنی یونان کے کوچ فرنانڈو سینٹوس اس بات سے بیزار ہیں کہ ان کی ٹیم کو ورلڈ کپ میں ہمیشہ ایسے لوگوں کے سامنے کھیلنا پڑ رہا ہے جو ان کے ملک کے خلاف ہیں۔

سٹیڈیم میں کولمبیا، جاپان اور آئیوری کوسٹ (ساحل العاج) کے پرستاروں کے درمیان ان کے پرستار ’پس کر رہ گئے‘ جبکہ برازیل کے مقامی لوگ بھی ان کے مقابلے ان کی مخالف ٹیم کی ہی حمایت کرتے نظر آئے۔ ان کا کہنا ہے ان کی ٹیم مقامی لوگوں کی ہمدردی پر اکتفا بھی نہیں کر رہی ہے۔

پرتگال سے تعلق رکھنے والے یونان کے کوچ نے کہا ’برازیل کے لوگ ہمیشہ سے جنوبی امریکی ٹیم کے حامی رہے ہیں۔ مجھے یہ علم نہیں کہ برازیل کے لوگ یونان کو کیوں پسند نہیں کرتے۔ ہمیں اس حقیقت کا اعتراف کرنا ہوگا لیکن اس بات سے مجھے دکھ ہوتا ہے کہ ہم لوگ ایک ہی زبان بولتے ہیں۔‘

وہ برازیل کے کوچ لوئی فیلپ سکولاری کے اچھے دوست ہیں اور ایک زمانے میں دونوں پڑوسی بھی ہوا کرتے تھے۔

اسی بارے میں