روی شاستری بھارتی ون ڈے ٹیم کے’انچارج‘ مقرر

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption 150 ون ڈے اور 80 ٹیسٹ میچ کھیلنے والی شاستری اس سے پہلے 2007 میں بنگلادیش کے خلاف ہونے والے بھارتی سیریز میں ٹیم کے کوچ رہ چکے ہیں

بھارتی ٹیم کی انگلینڈ کے خلاف حالیہ ٹیسٹ میں خراب کارکردگی کے بعد سابق کپتان روی شاستری کو بھارٹی ون ڈے ٹیم کا ’انچارج‘ مقرر کیا گیا ہے۔

بھارتی کرکٹ بورڈ کے مطابق ٹیم کی ذمہ داری کوچ ڈنکن فلیچر پر ہوگی تاہم 52 سالہ شاستری مجموعی طور پر ٹیم کی نگرانی کریں گے۔

بھارتی کرکٹ بورڈ نے بولنگ کوچ جو ڈاویز اور فیلڈنگ کوچ ٹریور پینی کو انگلینڈ کے خلاف ون ڈے سیریز کے دوران آرام دیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ سابق بھارتی کھلاڑی سنجے بھنگر اور بھررت ارون کو روی شاستری کا معاون مقرر کیا گیا ہے۔

بھارتی کرکٹ بورڈ کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ انھوں نے بورڈ حکام کے درمیان گذشتہ دو ہفتے سے ہونے والی بات چیت کے بعد روی شاستری کو انگلینڈ کے خلاف شروع ہونے والی ون ڈے سیریز کے لیے ٹیم کی ذمہ داری سونپی ہے۔

خیال رہے کہ روی شاستری کی تقرری اس وقت کی گئی ہے جب بھارتی ٹیم انگلینڈ کے ہاتھوں پانچ ٹیسٹ میچوں پر مشتمل سیریز 1-3 سے ہار چکی ہے۔

دونوں ٹیموں کے درمیان پہلا ٹیسٹ ہار جیت کے فیصلے کے بغیر ختم ہوا جبکہ لارڈذ میں کھیلے جانے والے دوسرے ٹیسٹ میچ میں بھارت نے 95 رنز سے فتح حاصل کی۔

ساوتھ ہیمپٹن میں کھیلے گئے تیسرے میچ میں بھارت کو 266 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا جبکہ انگلینڈ نے چوتھا ٹیسٹ ایک اننگز اور 54 رنز سے جیتا تھا۔

پانچویں اور فیصلہ کن ٹیسٹ میچ میں انگلش ٹیم نے ایک بار پھر بھارت کو صرف تین دن میں ایک اننگز اور 244 رن سے شکست دی۔

بھارت کی جانب سے 150 ون ڈے اور 80 ٹیسٹ میچ کھیلنے والی شاستری اس سے پہلے سنہ 2007 میں بنگلادیش کے خلاف سیریز میں ٹیم کے کوچ رہ چکے ہیں۔

اسی بارے میں