میری کوم گولڈ میڈل جیتنے والی پہلی بھارتی خاتون باکسر

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption کھیلوں کے اعداد و شمار کے ماہر مہنداس مینن نے اس کی نشاندہی کی ہے کہ یہ میری کوم کی بین الاقوامی کیریئر میں 15ویں گولڈ میڈل تھا

بھارت کی کھلاڑی میری کوم جنوبی کوریا میں ہونے والے ایشیئین گیمز میں گولڈ میڈل جیتنے والی پہلی بھارتی خاتون باکسر ہیں۔

پانچ دفعہ عالمی چیمپیئن رہنے والی کوم نے قازقستان کی زاہینہ شیکربیکوا کو 51 کلو گرام کی کیٹیگری میں شکست دی۔

سنہ 2012 کے لندن اولمپکس میں طلائی تمغہ جیتنے والی میری کوم پر حال ہی میں بالی وڈ میں ایک فلم بنائی گئی ہے۔

دریں اثنا بھارت کی لائٹ ویٹ باکسر سریتا دیوی نے انچن میں مقامی باکسر کے حق میں متنازع فیصلے کے خلاف احتجاجاً طلائی کا تمغہ لینے سے انکار کیا۔

بھارتی خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کے مطابق میری کوم نے زاہینہ شیکربیکوا کو دو صفر سے شکست دی۔

جڑواں بچوں کی ماں میری کوم کا تعلق بھارت کے شمال مشرقی ریاست منی پور سے ہے اور انھیں ’شاندار میری‘ کے نام سے یاد کیا جاتا ہے۔ ان کے مداحوں نے انھیں سوشل میڈیا پر مبارک باد دینا شروع کیا ہے۔

دارنگ جاہ نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ ’بھارت کو ایشیئن گیمز میں میری کوم کے سونے کے تمغے پر فخر ہے۔‘

انو راگ بوتھرا نے لکھا کہ ’میری کوم نے پنچ لگا کر سونے کا تمغہ جیتا۔ بھارت کے لیے فخر کرنے کا ایک اور لمحہ۔ ہم آپ سے متاثر ہیں۔ میری کوم کے لیے گولڈ۔‘

مانالی کلکارنو نے ٹویٹ کیا کہ’ایشیئن گیمز میں بھارت کے لیے ایک اچھا دن۔ میری کوم کے لیے گولڈ۔ میری کوم مبارک ہو۔‘

کھیلوں کے اعداد و شمار کے ماہر مہنداس مینن نے اس کی نشاندہی کی ہے کہ یہ میری کوم کا بین الاقوامی کیریئر میں 15واں گولڈ میڈل تھا۔

اسی بارے میں