آسٹریلیا کے مچل جانسن سال کے بہترین کرکٹر

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption مچل جانسن بہترین کرکٹر کا ایوارڈ جیتنے والے تیسرے آسٹریلوی ہیں

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے سالانہ ایوارڈز میں آسٹریلوی فاسٹ بولر مچل جانسن کو سال کا بہترین کرکٹر قرار دیا گیا ہے۔

سرگار فیلڈ سوبرز ٹرافی کے حقدار 33 سالہ جانسن کو آئی سی سی نے ٹیسٹ کرکٹر آف دی ایئر بھی چنا ہے۔

آئی سی سی کی ٹیم میں پاکستان سے صرف حفیظ

سابق آسٹریلوی کپتان رکی پونٹنگ کے بعد مچل جانسن دوسرے ایسے کرکٹر ہیں جنھوں نے یہ ایوارڈ ایک سے زیادہ مرتبہ جیتا ہے۔ انھیں 2009 میں بھی آئی سی سی کا کرکٹر آف دی ایئر قرار دیا گیا تھا۔

آئی سی سی کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق اس ایوارڈ کے لیے 26 اگست 2013 سے 17 ستمبر 2014 تک کے عرصے میں کھلاڑیوں کی کارکردگی کو مدِنظر رکھا گیا۔

اس عرصے میں مچل جانسن نے 15.23 کی اوسط سے ٹیسٹ میچوں میں 59 وکٹیں لیں جبکہ ون ڈے میں 16 میچوں میں ان وکٹوں کی تعداد 21 رہی۔

ایوارڈ کے حصول کے بعد جانسن کا کہنا تھا کہ ’اس ایوارڈ کے لیے کرکٹ کی دنیا کے چند بڑے نام نامزد تھے اور ایسے میں یہ ایوارڈ جیتنا خصوصی اعزاز ہے۔‘

انھوں نے کہا کہ ’یہ ایسی چیز ہے کہ مستقبل میں ریٹائرمنٹ کے بعد اس کے بارے میں سوچ کر مجھے فخر محسوس ہوگا۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption جنوبی افریقی بلے باز ابراہم ڈی ویلیئرز کو ایک روزہ کرکٹ میں سال کا بہترین کرکٹر چنا گیا

جانسن نے یہ بھی کہا کہ وہ ہمیشہ سے آسٹریلوی ٹیم میں شامل ہو کر کارکردگی دکھانا چاہتے تھے اور انھیں اپنے اس خواب کے پورا ہونے کا بھرپور یقین تھا۔

آسٹریلوی فاسٹ بولر نے کہا کہ ’میں آج جہاں ہوں اس سے بہت خوش ہوں اور بطور کرکٹر اپنے آپ میں بہتری لانا چاہتا ہوں۔‘

مچل جانسن کے علاوہ آئی سی سی کے ایوارڈ جیتنے والوں میں جنوبی افریقی بلے باز ابراہم ڈی ویلیئرز بھی شامل ہیں جنھیں ایک روزہ کرکٹ کے لیے سال کا بہترین کرکٹر چنا گیا۔

سال کے ابھرتے ہوئے نوجوان کرکٹر کے ایوارڈ کے حقدار انگلینڈ کے گیری بیلنس ٹھہرے جبکہ بہترین ٹی ٹوئنٹی پرفارمنس کا ایوارڈ آسٹریلوی بلے باز ایرون فنچ کو ملا جنھوں نے انگلینڈ کے خلاف 63 گیندوں پر 156 رنز کی جارحانہ اننگز کھیلی تھی۔

اس کے علاوہ رچرڈ کیٹل برو لگاتار دوسری بار سال کے بہترین امپائر قرار پائے۔ اس سے قبل بھارت کے بھونیشور کمار کو 5 نومبر کو اس سال کے لیے عوام کا پسندیدہ کرکٹر قرار دیا گیا تھا۔

خواتین میں آسٹریلوی ٹیم کی کپتان میل لیننگ سال کی بہترین ٹی 20 کرکٹ قرار پائیں جبکہ کھیل کو اس کی روح کے مطابق کھیلنے کا آئی سی سی سپرٹ آف کرکٹ ایوارڈ انگلینڈ کی کیتھرین برنٹ کو دیا گیا۔

اسی بارے میں