آسٹریلیا کے 530 رنز کے جواب میں بھارت کا بہتر آغاز

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption دوسرے دن کے کھیل کے اختتام پر اوپنر مرلی وجے 55 جبکہ چیتیشور پجارا 25 رنز پر کریز پرموجود تھے

آسٹریلیا کی ٹیم بھارت کے خلاف جاری تیسرے ٹیسٹ میچ کے دوسرے روز چائے کے وقفے سے قبل 530 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی جبکہ بھارت نے اپنی پہلی اننگز کا عمدہ آغاز کیا ہے۔

دوسرے دن کے کھیل کے اختتام پر بھارت نے ایک وکٹ کے نقصان پر 108 رنز بنا لیے تھے۔ اوپنر مرلی وجے 55 رنز پر جبکہ چیتیشور پجارا 25 رنز پر کریز پر موجود تھے۔

بھارت کے واحد آوٹ ہونے والے کھلاڑی شیکھر دھون تھے جنھیں سمتھ نے رائن ہیرس کی گیند پر کیچ آؤٹ کیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

اس سے پہلے چائے کے وقفے سے تھوڑی دیر قبل آسٹریلیوی کپتان سٹیون سمتھ کے آؤٹ ہوتے ہی آسٹریلیوی اننگز ختم ہو گئی۔ انھیں امیش یادو نے 192 رنز پر بولڈ کر دیا۔

سمتھ پہلے آسٹریلوی کپتان بن گئے ہیں جنھوں نے کپتانی کے پہلے دونوں میچوں میں سنچری سکور کی ہو۔ سٹیون سمتھ کو مائیکل کلارک کے ان فٹ ہو جانے کے بعددوسرے ٹیسٹ میں کپتان مقرر کیاگیا تھا۔ انھیں کپتانی اس قدر راس آئی ہے کہ مسلسل شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کر رہے ہیں۔

آسٹریلیا نے دوسرے دن کا کھیل پراعتماد انداز میں شروع کیا اور ناٹ آؤٹ بلے بازوں نے بغیر کسی پریشانی کے بھارتی بولروں کا ڈٹ کر مقابلہ کیا۔ بولر رائن ہیرس نے جارحانہ 74 رنز بنائے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption سٹیو سمتھ نے بطور کپتان پہلے دونوں میچوں میں سنچریاں سکور کی ہیں

بھارت کی جانب سے محمد شامی کو چار وکٹ ملے جبکہ امیش یادو اور رام چندر اشون نے تین تین وکٹیں لیں۔

سٹیو سمتھ اور بریڈ ہیڈن کے مابین 110 رنز کی شراکت ہوئی۔ وکٹ کیپر بریڈ ہیڈن دوسرے روز آؤٹ ہونے والے پہلے کھلاڑی تھے جو محمد شامی کی گیند پر وکٹ کیپر کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوگئے۔ آسٹریلیا کو دوسرا نقصان اس وقت ہوا جب مچل جانسن آف سپنر ایشون کی گیند پر سٹمپ ہو گئے۔

باکسنگ ڈے پر شروع ہونے والے ٹیسٹ میچ میں آسٹریلیا نے ٹاس جیت کر پہلے خود بیٹنگ کا فیصلہ کیا تھا۔ آسٹریلیا کو اننگز کے آغاز میں ہی اس وقت نقصان اٹھانا پڑا جب اوپنر ڈیوڈ وارنر بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹ گئے۔

انھیں میچ کے دوسرے ہی اوور میں امیش یادو نے کیچ آؤٹ کروایا۔

ابتدائی نقصان کے بعد روجرز اور شین واٹسن نے ٹیم کو سنبھالا اور نصف سنچریاں سکور کیں۔ ان دونوں نے دوسری وکٹ کے لیے 115 رنز کی شراکت قائم کی۔

تاہم اس سکور پر پہلے روجرز محمد شامی کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے کیچ ہوئے اور پھر واٹسن کو ایل بی ڈبلیو کر کے ایشون نے بھارت کو تیسری کامیابی دلوا دی۔

یہ پانچ میچوں کی ٹیسٹ سیریز کا تیسرا میچ ہے اور آسٹریلیا کو اس سیریز میں دو صفر کی سبقت حاصل ہے۔

اسی بارے میں