نیوزی لینڈ کی پانچویں جیت، افغانستان کو چھ وکٹوں سے شکست

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption نیوزی لینڈ کی جانب سے اوپنر برینڈن میک کلم 42 رنز بنا کر محمد نبی کے ہاتھوں آؤٹ ہوئے

نیپئر میں کھیلے جانے والے کرکٹ ورلڈ کپ کے پول اے کے میچ میں نیوزی لینڈ نے باآسانی افغانستان کو چھ وکٹوں سے شکست دے دی ہے۔

افغانستان نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا اور مقررہ 50 اوورز سے پہلے ہی 47.4 اوورز میں ساری ٹیم 186 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔

جواب میں نیوزی لینڈ نے ہدف 37 ویں اوور میں چار وکٹوں کے نقصان پر بنا لیا۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

نیوزی لینڈ پول اے میں سرِ فہرست ہے۔ اس نے پانچ میچ کھیلے ہیں اور پانچوں میچ جیتے ہیں۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے روس ٹیلر 24 اور اینڈرسن تین رنز پر ناٹ آؤٹ رہے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے اوپنر برینڈن میک کلم 42 رنز بنا کر محمد نبی کے ہاتھوں آؤٹ ہوئے۔ انھوں نے چھ چوکے اور ایک چھکا مارا۔

نیوزی لینڈ کو دوسرا نقصان 21 ویں اوور میں اس وقت ہوا جب ولیمسن 33 رنز بنا کر شپور زدران کے ہاتھوں آؤٹ ہوئے۔

نیوزی لینڈ کے آؤٹ ہونے والے تیسرے کھلاڑی گپتل تھے جنھوں نے 76 گیندوں میں 57 رنز سکور کیے اور وہ رن آؤٹ ہوئے۔

نیوزی لینڈ کے گرانٹ ایلیئٹ رن آؤٹ ہوئے۔ انھوں نے 19 رنز بنائے۔

اس سے قبل افغانستان کا آغاز اچھا نہیں تھا اور اس کی نصف ٹیم 59 رنز پر پویلین لوٹ چکی تھی تاہم نجیب اللہ زردان کے 56 اور سمیع اللہ شنواری کے 54 رنز کی اننگز کی وجہ سے سکور 186 رنز تک پہنچ پایا۔ اس کے چھ کھلاڑیوں کا سکور دوہرے ہندسے میں داخل نہیں ہو سکے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption افغانستان آج کا میچ ہارنے کی صورت میں کوارٹر فائنل کی دوڑ سے باہر ہو جائے گا

میچ میں ویٹوری چار اور بولٹ تین وکٹیں حاصل کر کے نمایاں بولر رہے۔

افغانستان کی جانب سے جاوید احمدی اور عثمان غنی نے اننگز کا آغاز کیا اور دوسرے ہی اوور میں بولٹ کی گیند پر احمدی ایک رن بنا کر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہو گئے۔

احمدی کے بعد عثمان غنی کا ساتھ دینے کے لیے نوروز مینگل بیٹنگ کے لیے آئے تاہم تیسرے اوور میں ویٹوری نے عثمان غنی کو کلین بولڈ کر دیا۔

24 کے مجموعی سکور پر افغانستان کو تیسرا نقصان اصغر کی صورت میں اٹھانا پڑا جو بولٹ کی گیند پر شارٹ کھیلتے ہوئے کیچ آؤٹ ہو گئے۔

اس کے بعد بھی وقفے وقفے سے افغانستان کی وکٹیں گرتی رہی جس میں نوروز مینگل 27 رنزپر ویٹوری کا دوسرا شکار بنے جبکہ مجموعی سکور میں 10 رنز کے اضافے پر محمد بنی بھی 6 رنز بنا کر ویٹوری کو تیسری وکٹ دے بیٹھے۔

ویٹوری نے اپنا چوتھا شکار افسر زازئی کو بنایا جو اپنا کھاتہ کھولے بغیر 59 کے مجموعی سکور پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہو گئے۔

اسی سکور پر افسر زازئی ایک ہی گیند کھیل کر صفر پر آؤٹ ہو گئے۔

اس کے بعد نجیب اللہ اور سمیع اللہ کے درمیان 86 رنز کی شراکت داری اس وقت ختم ہوئی جب نجیب اللہ 56 رنز بنا کر ملِن کی گیند پر ویٹوری کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہو گئے۔

اس کے بعد دعوت زردان 5گیندوں کا سامنا کر کے ایک رن بنا کر آؤٹ ہوئے اور اس کے بعد سمیع اللہ شنواری 54 رنز اینڈرسن کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔

آؤٹ ہونے والے آخری کھلاڑی حامد حسن تھے جنھوں نے 21 گیندوں پر 16 رنز بنائے۔

افغانستان کرکٹ ٹیم کے کپتان محمد نبی نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کرتے ہوئے کہا تھا:’ یہ ایک اچھی وکٹ ہے اور ہم اچھا سکور کرنے کی کوشش کریں گی۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption نجیب اللہ اور سمیع اللہ کے درمیان 86 رنز کی شراکت داری ہوئی

نیوزی لینڈ اس سے پہلے کھیلے جانے والے چاروں میچ جیت کر پہلے ہی کوارٹر فائنل میں پہنچ چکا ہے۔

افغانستان نے چار میچوں میں ایک میں کامیابی حاصل کی ہے اور اگر یہ آج کا میچ ہار جاتا ہے تو اس صورت میں کوارٹر فائنل کی دوڑ سے باہر ہو جائے گا۔

اس سے پہلے سکاٹ لینڈ، متحدہ عرب امارات اور زمبابوے کوارٹر فائنل میں نہیں پہنچ سکے ہیں۔

نیوزی لینڈ نے اپنی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی ہے۔

افغانستان نے کھیلے جانے والے چار میچوں میں ایک میں سکاٹ لینڈ کو ایک وکٹ سے شکست دی تھی جبکہ اسے آسٹریلیا، سری لنکا، بنگلہ دیش سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

دوسری جانب نیوزی لینڈ کھیلے جانے والے چاروں میچوں میں کامیاب رہا ہے اور اس وقت اپنے پول میں پہلی پوزیشن پر ہے۔

نیوزی لینڈ نے سری لنکا، سکاٹ لینڈ، انگلینڈ اور آسٹریلیا کو شکست دی ہے۔

اسی بارے میں