16 مئی سے سپین میں فٹبال کے تمام مقابلے معطل

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption سپین کے لا لیگا میں لیونل میسی اور کرسٹانو رونالڈو جیسے مشہور حصہ لیتے ہیں

سپین کی فٹبال فیڈریشن نے اعلان کیا ہے کہ حکومت کی جانب سے نئی قانون سازی کی وجہ سے 16 مئی سے ملک میں فٹبال کے تمام مقابلوں کو غیر معینہ مدت کے لیے معطل کیا جا رہا ہے۔

سپین میں فٹبال سیزن اپنے اختتامی مراحل میں ہے اور لا لیگا کے صرف تین میچ باقی ہیں۔

سپین کی فٹبال لیگ دنیا کی بہترین فٹبال تصور کی جاتی ہیں جہاں کے دنیا کے مہنگے ترین کھلاڑی رئیل میڈرڈ اور بارسلونا جیسے مشہور فٹبال کلبوں کی نمائندگی کرتے ہیں۔

ہسپانوی فٹبال فیڈریشن نے فٹبال کے تمام مقابلوں کو منسوخ کرنے کا فیصلہ حکومت کی جانب سے اس قانونی مسودے کی منظوری کے بعد اٹھایا ہے جس کے تحت فٹبال کلب بھی میچ دکھانے کے ٹی وی حقوق دینے میں اپنا کردار ادا کر سکیں گے۔

ابھی تک سپن کی فٹبال فیڈریشن تمام مقابلوں کے ٹی وی حقوق کا سودا کرنے کی مجاز ہے۔

سپین کی فٹبال فیڈریشن کے ایک اعلامیہ کے مطابق وہ فنڈز میں صرف چار اعشاریہ پانچ فیصد ریوینیو کی حقدار قرار دیے جانے پر ناخوش ہے۔

البتہ فیڈریشن نے کہا ہے کہ وہ اب بھی حکومت سے بات چیت کرنے کے لیے تیار ہے۔

فٹبال فیڈریشن نے کہا کہ اس نے تین ماہ تک حکومت سے مذاکرات کیے جو بے نتیجہ رہے لیکن وہ اب بھی بات چیت کے دروازے بند نہیں کر رہی ہے۔

فیڈریشن نے کہا میچوں کی معطلی کے فیصلے سے ملک میں چھ لاکھ کھلاڑی اور 30 ہزار میچ متاثر ہوں گے۔