زمبابوے کرکٹ ٹیم کے دورے کے بارے میں فیصلہ جمعہ کو

تصویر کے کاپی رائٹ

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریار خان نے کہا ہے کہ زمبابوے کرکٹ حکام انھیں پاکستان کے دورے کے بارے میں اپنے حتمی فیصلے سے جعمہ کو آگاہ کریں گے۔

قبل ازیں زمبابوے نے اپنی کرکٹ ٹیم کے دورۂ پاکستان کی منسوخی کا فیصلہ کرکے اسے چند لمحات میں ہی واپس لے لیا۔

زمبابوے کرکٹ یونین کا کہنا ہے کہ وہ اپنی ٹیم پاکستان بھیجنے کے بارے میں اس وقت اپنی حکومت سے مسلسل رابطے میں ہے ۔

زمبابوے نے اگرچہ اس دورے کی تصدیق کررکھی ہے لیکن بدھ کے روز کراچی میں دہشت گردوں کی فائرنگ کے نتیجے میں پنتالیس اسماعیلی فرقے سے تعلق رکھنے والے افراد کی ہلاکت کے واقعے کے بعد یہ قیاس آرائیاں پیدا ہوئی ہیں کہ زمبابوے کی ٹیم پاکستان نہ آئے۔

جمعرات کے روز زمبابوے کرکٹ یونین نے دورۂ پاکستان کی منسوخی کے بارے میں پریس ریلیز جاری کردیا تھا جو کچھ ہی دیر میں واپس لے لیا۔

زمبابوے کرکٹ کے ترجمان لوو موبینڈا نے بی بی سی کو بتایا کہ دورے کی منسوخی کے بارے میں جاری کردہ پریس ریلیز کو واپس لے لیا گیا ہے اور ایک دوسرا پریس ریلیز جاری کیا گیا ہے اور میڈیا سے درخواست کی گئی ہے کہ وہ پہلی پریس ریلیز کو نظرانداز کردے۔

انھوں نے کہا کہ زمبابوے کرکٹ کا اجلاس جاری ہے جس میں اس دورے کے بارے میں غور کیا جا رہا ہے اور جو بھی فیصلہ ہوگا وہی ہمارا موقف ہوگا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے ترجمان نے رابطہ کرنے پر بی بی سی کو بتایا کہ زمبابوے نے ابھی تک دورے کی منسوخی کے بارے میں باضابطہ طور پر پاکستان کرکٹ بورڈ کو مطلع نہیں کیا۔

جمعرات کے روز پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیرمین شہریارخان نے لاہور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ انہیں اس طرح کی خبریں آئی ہیں کہ زمبابوے کو اپنی ٹیم پاکستان بھیجنے پر تحفظات ہیں اور کراچی کی تازہ ترین صورتحال کے پیش نظر یہ تحفظات بے جا بھی نہیں ہیں۔

زمبابوے کی ٹیم کو انیس مئی کو پاکستان پہنچنا ہے اور اس دورے میں اسے تین ون ڈے انٹرنیشنل اور دو ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل کھیلنے ہیں جو لاہور میں کھیلے جائیں گے۔

زمبابوے کی ایک سکیورٹی ٹیم گزشتہ دنوں لاہور آئی تھی جس نے سیکورٹی کے انتظامات کا جائزہ لیا تھا۔

واضح رہے کہ پاکستان میں مارچ دو ہزار نو میں سری لنکن ٹیم پر ہونے والے دہشت گرد حملے کے بعد سے انٹرنیشنل کرکٹ نہیں کھیلی جاسکی ہے۔

زمبابوے کرکٹ بورڈ کے ترجمان لوو موبینڈا نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ’ایک پریس ریلیز پہلے جاری کی گئی تھی کہ پاکستان کا دورہ منسوخ کر دیا گیا ہے۔ جس کے بعد ہم نے ایک اور پریس ریلیز جاری کیا ہے جس میں میڈیا سے درخواست کی گئی ہے کہ پہلے جاری کردہ پریس ریلیز کو نظر انداز کریں۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ ’حقیقت ہے اور جو درست موقف بھی ہے کہ کرکٹ بورڈ زمبابوے کا بورڈ ایک اجلاس میں مصروف ہے جس میں دورے کے حوالے سے حتمی فیصلے پر غور کیا جا رہا ہے۔ اس کے نتیجے میں جو بھی فیصلہ ہو گا اس کا اعلان کر دیا جائے گا اور وہی ہمارا حقیقی موقف ہو گا۔‘

اسی بارے میں