پاکستانی فٹبالر کے شہر میں امریکی سکول

Image caption امریکی کلب میں آنے سے قبل کلیم اللہ نے گذشتہ برس کرغستان کے کلب ڈورڈئی کی نمائندگی کی تھی

امریکہ میں پروفیشنل لیگ کھیلنے والے پاکستانی فٹبالر کلیم اللہ نے ایک امریکی تعلیمی ادارے سے معاہدہ کیا ہے جس کے تحت یہ ادارہ کلیم اللہ کے آبائی شہر چمن میں سکول قائم کرے گا۔

کلیم اللہ نے سان فرانسسکو سے بی بی سی اردو سروس کو دیے گئے انٹرویو میں کہا کہ اس تعلیمی ادارے کے پاکستان سمیت متعدد ممالک میں سکولز موجود ہیں اور اب وہ ان کے شہر چمن میں بھی سکول قائم کرنا چاہتا ہے جس کی تعمیر جلد شروع ہو جائے گی اور وہاں آئندہ سال سے تعلیم شروع ہوجائے گی۔

پاکستان فٹبالر کلیم اللہ امریکی لیگ میں

کلیم اللہ کا کہنا ہے کہ ان کی دیرینہ خواہش رہی ہے کہ ان کا شہر بھی تعلیم اور کھیل کی بنیادی سہولتوں کے ساتھ نمایاں نظر آئے۔

کلیم اللہ جو سان فرانسسکو کے کلب سیکرامینٹو ری پبلک کی نمائندگی کر رہے ہیں اس بات پر بہت خوش ہیں کہ یہاں کھیلتے ہوئے انھیں بہت زیادہ پذیرائی ملی ہے اور ان کے کھیل کو کافی سراہا گیا ہے۔

Image caption کلیم اللہ جو سان فرانسسکو کے کلب سیکرامینٹو ری پبلک کی نمائندگی کر رہے ہیں

کلیم اللہ نے کہا کہ انھوں نے امریکہ میں کھیلتے ہوئے یہ پیغام دینے کی بھی کوشش کی ہے کہ پاکستان ایک پرامن ملک ہے اور پاکستانی امن پسند لوگ ہیں۔

امریکی کلب میں آنے سے قبل کلیم اللہ نے گذشتہ برس کرغستان کے کلب ڈورڈئی کی نمائندگی کی تھی اور ان کے 18 گول نے کلب کو لیگ جتوانے میں اہم کردار ادا کیا تھا۔

کلیم اللہ پاکستانی فٹبال کی تاریخ کے مہنگے ترین کھلاڑی ہیں۔ ڈورڈئی نے ان سے ایک لاکھ ڈالرز کے عوض دو سالہ معاہدہ کیا تھا۔

کلیم اللہ پہلے ہی کہہ چکے ہیں کہ انگلش فٹبال لیگ ان کی اصل منزل ہے اور وہ اپنے بہترین کھیل سے انگلش فٹبال لیگ کا حصہ بننا چاہتے ہیں۔

اسی بارے میں