اظہرعلی اور حفیظ ہفتے تک فیصلہ کر لیں: شہریارخان

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption دونوں کھلاڑیوں نے محمد عامر پر اعتراض کرتے ہوئے لاہور میں جاری قومی فٹنس کیمپ میں شمولیت سے انکار کررکھا ہے

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریارخان نے ون ڈے کپتان اظہر علی اور محمد حفیظ سے جمعے کے روز ملاقات کی ہے ۔

دونوں کرکٹرز نے سپاٹ فکسنگ میں ملوث سزا یافتہ فاسٹ بولر محمد عامر پر اعتراض کرتے ہوئے لاہور میں جاری قومی فٹنس کیمپ میں شمولیت سے انکار کررکھا ہے۔

عامر کی موجودگی پر اظہر اور حفیظ کا بائیکاٹ

’حفیظ اور اظہر کے خلاف کارروائی ہو سکتی ہے‘

شہریارخان نے دونوں کرکٹرز سے تفصیلی بات کی ہے اور ان کا موقف سنا ہے تاہم انھوں نے دونوں سے کہا ہے کہ وہ ہفتے کی صبح تک قومی کیمپ میں شمولیت کے بارے میں فیصلہ کرلیں۔

شہریارخان نے محمد حفیظ اور اظہرعلی پر یہ بھی واضح کردیا ہے کہ قومی کیمپ میں شامل نہ ہوکر وہ سینٹرل کنٹریکٹ کی خلاف ورزی کر رہے ہیں۔

واضح رہے کہ شہریارخان نے جمعرات کے روز بی بی سی سے بات کرتے ہوئے یہ کہا تھا کہ وہ اظہرعلی اور محمد حفیظ سے بات کریں گے لیکن اگر وہ کیمپ میں آنے کے لیے تیار نہ ہوئے تو ان کے خلاف تادیبی کارروائی بھی کی جاسکتی ہے۔

خیال رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے محمد عامر کی مخالفت کرنے والے کرکٹرز کو منانے کی ذمہ داری ہیڈ کوچ وقاریونس کو سونپی تھی لیکن محمد حفیظ اور اظہرعلی نے ان پر یہ بات واضح کردی کہ اگر محمد عامر کو واپس لانے کی پالیسی پاکستان کرکٹ بورڈ نے بنائی تھی تو چیئرمین شہریارخان کو پہلے تمام کھلاڑیوں کے تحفظات دور کرنے چاہیے تھا۔

اسی بارے میں