علیم ڈار کی ٹیسٹ میچوں کی سنچری مکمل

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

پاکستانی امپائر علیم ڈار نے ایک سو یا اس سے زیادہ ٹیسٹ میچوں میں امپائرنگ کے فرائض سرانجام دینے کا اعزاز حاصل کر لیا ہے۔

علیم ڈار اس وقت جنوبی افریقہ اور انگلینڈ کے مابین جاری سیریز میں امپائرنگ کے فرائض انجام دے رہے ہیں۔ سنیچر سے کیپ ٹاؤن میں شروع ہونے والا ٹیسٹ میچ ان کا 100 واں ٹیسٹ میچ ہے۔

علیم ڈار کے علاوہ دنیا میں سٹیو بکنر(128) اور روڈی کرٹزن (108) دو ایسے امپائر ہیں جنھوں نے سو سے زیادہ ٹیسٹ میچوں میں امپائرنگ کے فرائض دیے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption علیم ڈار اب تک 100 ٹیسٹ میچوں، 178 ایک روزہ میچوں اور 35 ٹی 20 میچوں میں امپائرنگ کر چکے ہیں

47 سالہ علیم ڈار پچھلے 12 برسوں سے امپائرنگ کے فرائض انجام دے رہے ہیں۔ علیم ڈار نے اپنی امپائرنگ کا آغاز سنہ 2000 میں گوجرانوالا میں پاکستان اور سری لنکا کے مابین ایک روزہ میچ سے کیا تھا اور تین سال بعد 2003 میں بنگلہ دیش اور انگلینڈ کے مابین ٹیسٹ میچ سے ٹیسٹ میچوں میں امپائرنگ کا آغاز کیا تھا۔

علیم ڈار اب تک 100 ٹیسٹ میچوں، 178 ایک روزہ میچوں اور 35 ٹی 20 میچوں میں امپائرنگ کر چکے ہیں۔

علیم ڈار کو کرکٹ کی دنیا میں انتہائی عزت کی نگاہ سے دیکھا جاتا ہے۔ وہ 2009 ,2010 اور 2011 میں آئی سی سی کے امپائر آف دی ایئر کا اعزاز پا چکے ہیں۔ علیم ڈار کو 2013 میں پاکستان کے تیسرے بڑے قومی اعزاز ستارہ امتیاز سے نواز گیا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption علیم ڈار سٹیو بکنر کے ساتھ کرکٹ کے عالمی کپ کے فائنل میں بھی امپائرنگ کے فرائض سرانجام دے چکے ہیں

علیم ڈار کا شمار ان پانچ امپائروں میں ہوتا ہے جنھوں نے 90 سے زیادہ ٹیسٹ میچوں میں امپائرنگ کی ہے۔ ان میں سٹیو بکنر، 128، روڈی کرٹزن 108، علیم ڈار 100، ڈیرل ہارپر 95، اور ڈیوڈ شیپرڈ 92 ٹیسٹ شامل ہیں۔

اسی بارے میں