سلمان بٹ اور محمد آصف کی کرکٹ میں واپسی

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption سلمان بٹ اور محمد آصف نے چونکہ تاخیر سے اپنا جرم قبول کیا تھا لہذا ان کا بحالی کا پروگرام دیر سے شروع ہوا تھا

سپاٹ فکسنگ میں سزایافتہ کرکٹرز سلمان بٹ اور محمد آصف پانچ سال کے بعد ایک مرتبہ پھر کرکٹ کے میدان میں نظر آنے والے ہیں۔

یہ دونوں کرکٹرز اتوار کے روز قومی ایک روزہ کرکٹ ٹورنامنٹ میں واپڈا کی طرف سے فاٹا کے خلاف حیدرآباد میں میچ کھیلیں گے۔

واضح رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے محمد عامر کی ٹیم میں واپسی کے بعد سلمان بٹ اور محمد آصف کی واپسی کا بھی عندیہ دے دیا ہے۔

’آصف، سلمان ٹیم میں شمولیت کا حق کھو چکے ہیں‘

’سلمان اور آصف کو بھی دوبارہ موقع ملنا چاہیے‘

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریار خان نے بی بی سی کو دیے انٹرویو میں کہا کہ ’پابندی ختم ہونے کے بعد واپسی ان دونوں کرکٹرز کا قانونی حق ہے۔‘

ان دونوں کی فرسٹ کلاس کرکٹ میں واپسی آئندہ ماہ ہوگی اور قومی ٹیم میں ان کی شمولیت کا انحصار فرسٹ کلاس کرکٹ میں ان کی کارکردگی پر ہوگا۔

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کوچ وقار یونس نے بھی گذشتہ دنوں ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ وہ محمد عامر کے بعد سلمان بٹ اور محمد آصف کی واپسی کا بھی خیرمقدم کریں گے اور سلیکٹرز کو ان دونوں کی کارکردگی پر نظر رکھنی چاہیے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption قومی ٹیم میں ان کی شمولیت کا انحصار فرسٹ کلاس کرکٹ میں ان کی کارکردگی پر ہوگا

یاد رہے کہ سلمان بٹ محمد آصف اور محمد عامر سنہ 2010 میں انگلینڈ کے دورے میں سپاٹ فکسنگ میں ملوث پائے گئے تھے، جس پر آئی سی سی نے تینوں کرکٹرز پر پانچ سالہ پابندی عائد کردی تھی۔ جبکہ لندن کی عدالت نے بھی سلمان بٹ کو ڈھائی سال، محمد آصف کو ایک سال اور محمد عامر کو چھ ماہ کی سزا سنائی تھی۔

تینوں کرکٹرز پر پابندی چار ستمبر کو ختم ہوئی تھی۔ تاہم آئی سی سی اور پاکستان کرکٹ بورڈ سے تعاون کرنے پر محمد عامر کو پابندی کی مدت ختم ہونے سے قبل ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے کی اجازت مل گئی تھی۔

سلمان بٹ اور محمد آصف نے چونکہ تاخیر سے اپنا جرم قبول کیا تھا لہذا ان کا بحالی کا پروگرام دیر سے شروع ہوا تھا جس کا کافی حصہ اب یہ دونوں کرکٹرز مکمل کرچکے ہیں اس لیے انھیں بھی ایک روزہ کرکٹ ٹورنامنٹ کھیلنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

اسی بارے میں