نائیکی کی جانب سے خودکار تسموں والے جوتے

تصویر کے کاپی رائٹ Nike
Image caption یہ جوتے کمپنی کی ایپ استعمال کرنے والے صارفین تک محدود رہیں گے

کھیلوں کا سامان بنانے والی مشہور امریکی کمپنی نائیکی نے خود بخود تسموں کی گرفت سخت کرنے والے جوتے متعارف کرا دیے ہیں۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ اِس سال کے اختتام سے قبل ہائپر ایڈاپٹ ٹرینر نامی جوتوں کی یہ سیریز فروخت کے لیے پیش کر دی جائے گی۔

نائیکی کمپنی کے خودکار طریقے سے تسمہ سخت کرنے کی ٹیکنالوجی سے لیس جوتے سنہ 1989 کی مشہور فلم ’بیک ٹو دا فیوچر ٹو‘ میں دکھائے گئے تھے۔ لیکن سنہ 2013 میں کمپنی نے عام لوگوں کے لیے جوتے کی تیاری کا آغاز کر دیا تھا۔

تاہم حیرت انگیز طور پر کمپنی کا کہنا ہے کہ یہ جوتے کمپنی کی ایپ استعمال کرنے والے صارفین تک محدود رہیں گے۔

کچھ لوگوں کی نظر میں یہ خودکار تسموں والے جوتے مفید سے زیادہ محض شعبدہ بازی ہو سکتے ہیں، تاہم نائیکی اور سافٹ وئیر کے ساتھ سے کمپنی کی دیگر اشیا کے فروغ میں مدد ملے گی، خاص طور پر اُن کے لیے جو ہائپر ایڈاپٹ تسموں کے بارے میں جاننے کے لیے متجسس ہیں۔

اِس وقت نائیکی کی ایپ صارفین کی سرگرمیوں پر نظر رکھنے اور اُنھیں تربیتی پروگرام کی پیشکش پر کام کر رہی ہیں۔ لیکن جون کے مہینے سے اِس میں ذاتی نوعیت کی خریداری کے حوالے سے تجاویز کے علاوہ آن لائن سٹور بھی متعارف کرایا جائے گا۔

ٹیکنالوجی میگزین سٹف کے آن لائن ایڈیٹر مارک میک لارن کا کہنا ہے کہ ’حال ہی میں کھلاڑیوں کے لباس کی مارکیٹ پر نائیکی کی گرفت کمزور ہوئی ہے۔ ان جوتوں سے لوگوں کی توجہ نائیکی پر برقرار رہے گی۔ اس کا اندازہ ہمارے قارئین کے ردِ عمل سے بھی ہوتا ہے جنھوں نے بہت گرم جوشی کا مظاہرہ کیا ہے۔‘

اسی بارے میں