سیمی فائنل میں سیٹ ایک ،سواریاں تین

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

ورلڈ ٹی ٹوئینٹی کا پہلا مرحلہ تقریباً اپنے اختتام کو پہنچ چکا ہے۔ پوائنٹ ٹیبل کو دیکھیں تو ابھی تک سیمی فائنلز کی تصویر واضع نہیں ہوتی۔

پہلے گروپ سے ویسٹ انڈیز اور انگلینڈ کی پوزیشن ابھی تک مستحکم نظر آ رہی ہے، لیکن دوسرے گروپ میں، جسے گروپ آف ڈیتھ کہا جا رہا ہے، ابھی تک ماسوائے نیوزی لینڈ کے کسی بھی ٹیم کے سیمی فائنل میں جانے کے بارے میں حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جا سکتا۔

آئیے نظر ڈالتے ہیں گروپ ٹو کی ٹیموں پر اور دیکھتے ہیں کہ نیوز ی لینڈ کو چھوڑ کر، باقی چار ٹیموں کو سیمی فائنل کھیلنے کے لیے کیا کرنا پڑے گا۔

بھارت

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

بھارت نے اب تک تین میچ کھیلے ہیں، جن میں سے دو میں کامیابی حاصل کی ہے۔ پاکستان اور بنگلہ دیش سے میچز جیتنے کے بعد بھارت کو اب آسٹریلیا کے خلاف بھی اپنا آخری میچ جیتنا ہوگا۔

اگر پاکستان، آسٹریلیا کو ہرا دیتا ہے اور بھارت آسٹریلیا سے اپنا میچ ہار جاتا ہے تو تینوں ٹیموں کے چار چار پوائنٹ ہوجائیں گے اور بات نیٹ رن ریٹ پر چلی جاے گی۔ آسٹریلیا کے خلاف میچ میں بھارت کی کوشش ہوگی کہ وہ جتنا ہوسکے اتنے کم فرق سے ہاریں ۔ اگر آسٹریلیا پاکستان کو ہرا دیتا ہے تو دونوں ٹیمیں ایک لحاظ سے کوارٹر فائنل میچ کھیلیں گی۔ بھارت اور آسٹریلیا میں سے جو بھی جیتا وہ سیمی فائنل میں جائے گا۔

آسٹریلیا

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

آسٹریلیا کی پوزیشن اس وقت بھارت سے کچھ زیادہ مختلف نہیں ہے۔

اگر آسٹریلیا پاکستان اور بھارت دونوں سے جیت جاتا ہے تو وہ سیمی فائنل میں چلا جائے گا۔ لیکن اگر آسٹریلیا پاکستان سے ہار جاتا ہے تو اسے بھارت کے خلاف میچ میں ایک اور موقع ملے گا۔ اسے نہ صرف یہ میچ جیتنا ہوگا، بلکہ بھارت کو اس میچ میں واضع فرق سے شکست دینا ہوگی تاکہ اس کا نیٹ رن ریٹ بہتر ہو۔

پاکستان

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

پاکستان بھی اسی کشتی کا سوار ہے جس میں بھارت اور آسٹریلیا ہیں۔

پاکستان ٹیم کو نہ صرف آسٹریلیا کو اچھے مارجن سے شکست دینی ہے بلکہ دوا کے ساتھ ساتھ انھیں یہ دعا بھی کرنا ہوگی کہ آسٹریلیا بھارت کو شکست دے دے۔ پاکستان کے لیے اچھی خبر یہ ہے کہ ان کا نیٹ رن ریٹ ابھی تک اچھا ہے اور آسٹریلیا کے خلاف میچ میں ان کی جیت سے اس میں مزید بہتری لائی جا سکتی ہے۔ اگر پاکستان بہتر رن ریٹ کے ساتھ اپنا آخری میچ جیت جاتا ہے اور آسٹریلیا بھارت کو اتنے فرق سے شکست دے دیتا ہے جتنا پاکستان کو درکار ہے تو پاکستان ٹیم سیمی فائنل کے لیے اپنی فلائٹ بک کر لے گی۔