’ہم بھول گئے کہ انہی کھلاڑیوں نے پاکستان کا نام روشن کیا‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ شاہد آفریدی اور وقار یونس نے پاکستان کے لیے بہت کچھ کیا ہے

پاکستان کے وزیر داخلہ چوہدری نثار علی حان کا کہنا ہے کہ وہ پیر کو وزیر اعظم نواز شریف سے پاکستان کرکٹ بورڈ کی انکوائری کمیٹی کی رپورٹ لیک ہونے پر تحقیقات کروانے کی درخواست کریں گے۔

سنیچر کو صحافیوں سے بات کرتے ہوئے چوہدری نثار علی خان کا کہنا تھا کہ ’کرکٹ بورڈ کی انکوائری کمیٹی کی رپورٹ وزیر اعظم کو پیش کیے جانے سے قبل ہی لیک کر دیا گیا اس بات کی تحقیق ہونی چاہیے۔‘

چوہدی نثار کا کہنا تھا کہ ’میں نے وعدہ کیا تھا کہ اس کمیٹی کی رپورٹ جب حکومت کے پاس آئے گی تو اسے عوام کے سامنے لایا جائے گا لیکن اب عوام کے سامنے پیش کرنے کو رہ کیا گیا ہے رپورٹ تو پہلے ہی لیک ہو چکی ہے۔‘

ان کا کہنا تھا کہ یہ کھلاڑی ہمارے سٹار ہیں۔ شاہد آفریدی نے پاکستان کے لیے بہت کچھ کیا ہے اور وقار یونس دنیا کے ٹاپ بولر رہے ہیں لوگ ان کی بولنگ دیکھنے آتے تھے۔

وزیر داخلہ نے کہا کہ ’میں وزیر اعظم سے درخواست کروں گا کہ اس کی تحقیق ہونی چاہیے کہ یہ رپورٹ آپ تک پہنچنے سے پہلے ہی لیک کیسے ہوئی اور اس کا مقصد صرف ہمارے قومی کھلاڑیوں کی تضحیک کرنا ہے۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

’یہ جو ہم نے طرح طرح کہ الزامات لگانا شروع کر دیے ہیں ہم بھول گئے ہیں کہ ان لوگوں نے پاکستان کا نام روشن کیا ہے۔‘

انھوں نےگذشتہ سال ہونے والے ایشیا کپ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ’یہی شاہد آفریدی تھے جنھوں نے انڈیا کے خلاف دو گیندوں پر دو چھکے لگا کر جتوایا تو ہم ان کے نعرے لگا رہے تھے۔‘

واضح رہے کہ حال ہی میں بنگلہ دیش میں ہونے والے ٹی 20 ایشیا کپ میں پاکستان کرکٹ ٹیم کی خراب کاکردگی پر پاکستان کرکٹ بورڈ نے وزیر اعظم نواز شریف کی ہدایت پر ایک انکوائری کمیٹی تشکیل دی تھی جس کا مقصد قومی ٹیم کی کاکردگی کا جائزہ لینا تھا۔

تاہم ورلڈ ٹی 20 میں شکست کے بعد پاکستان ٹیم کی کارکردگی کا جائزہ لینے والی کمیٹی کی رپورٹ لیک ہونے کے بعد بعض ٹی چینلز پر دکھائی جانے لگی اور اس پر تبصرے بھی کیے جا رہے ہیں۔

اسی بارے میں