سری لنکا کو اننگز کی شکست سے بچنے کے لیے مزید 88 رنز درکار

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

انگلینڈ اور سری لنکا کے مابین کھیلے جانے والے دورسرے ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن کھیل کے اختتام پر فالو آن کے بعد سری لنکا نے اپنی دوسری اننگز میں پانچ وکٹوں کے نقصان پر 309 رنز بنا لیے تھے۔

سری لنکا کو اب بھی انگلینڈ کی پہلی اننگز کا خسارہ ختم کرنے کے لیے مزید 88 رنز درکار ہیں۔

٭ میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

اتوار کو جب میچ کے تیسرے دن کے کھیل کا اختتام ہوا تو سری لنکا کی جانب سے دنیش چندیمل 54 اور ملیندا سروردنے 35 رنز پر کھیل رہے تھے۔

سری لنکا نے آٹھ وکٹوں کے نقصان پر 91 رنز سے اپنی پہلی اننگز کا دوبارہ آغاز کیا تو پوری ٹیم 101 رنز پر آوٹ ہو گئی، جس کے باعث سری لنکا کو فالو آن کرنا پڑا۔

اننگز کی شکست سے بچنے کے لیے سری لنکا کی ٹیم کے لیے ضروری ہے کہ وہ کم از کم 397 رنز سکور کرے۔

پہلی اننگز میں 3 کے سکور پر آؤٹ ہونے والے سری لنکن بلے باز میتھیوز نے آج اتوار کو اچھی بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور وہ 80 رنز بنا کر اینڈرسن کا نشانہ بنے۔

اتوار کو آوٹ ہونے والے دیگر کھلاڑیوں میں اوپنر سلوا 60 رنز بنا کر نمایاں رہے۔

انگلینڈ کے بولر معین علی،کرس وہکس اور فن نے ایک ایک وکٹ حاصل کی جبکہ اینڈرسن نے دو کھلاڑیوں کو نشانہ بنایا۔

لیڈز میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ میں انگلینڈ نے سری لنکا کو تین روز کےاندر ایک اننگز اور 88 رنزسےشکست دی تھی۔

اس سے قبل انگلینڈ نے پہلی اننگز میں نو وکٹوں کے نقصان پر 498 بنا کراننگز ڈیکلیئر کر دی تھی۔

انگلینڈ کی اننگز کی خاص بات معین علی کی سنچری تھی جنھوں نے 155 رنز کی شانداراننگز کھیلی۔

اسی بارے میں