’شعیب نے میری اور یوراج کی پٹائی کی تھی‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption ہربھجن سنگھ بھارتی گیند باز سری سنت کو میدان میں ہی تھپڑ مارنے اور آسٹریلوی کرکٹ کھلاڑی اینڈریو سائمنڈ کے ساتھ توتو میں میں کرنے کے واقعے کے حوالے سے بھی بحث کا موضوع بن چکے ہیں

کرکٹ کے میدان میں تلخ قسم کی نوک جھونک کے کئی معاملات کے سبب سرخیوں میں رہنے والے انڈین گیند باز ہربھجن سنگھ نے کہا ہے کہ پاکستان کے سابق فاسٹ بولر شعیب اختر نے ایک بار ان کی اور بلے باز یوراج سنگھ کی پٹائی کی تھی۔

انھوں نے یہ بات ایک نجی ٹی وی چینل سے بات چیت میں کہی۔

ایک ٹی وی پروگرام میں بات کرتے ہوئے ہربھجن سنگھ نے کہا: ’شعیب نے ایک بار مجھے دھمکی دی تھی کہ وہ میرے کمرے میں آکر مجھے ماریں گے۔ میں نے کہا، کمرے میں آنا، پھر دیکھیں گے کہ کون کس کو پیٹتا ہے۔ میں بہت ڈرا ہوا تھا۔ وہ جسمانی طور پر کافی ہٹّے کٹّے ہیں۔ ایک بار انھوں نے مجھے اور یوراج (یوراج سنگھ) کو کمرے میں گھس کر مارا تھا۔ چونکہ وہ کافی موٹے تگڑے ہیں اس لیے انھیں پکڑنا مشکل تھا۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption پاکستانی گیند باز شعیب اختر بھی کھیل کے میدان پر اپنی حرکتوں کی وجہ سے سرخیوں میں رہے

حالانکہ ہربھجن سنگھ نے یہ بات بھی تسلیم کی کہ کرکٹ کے میدان میں شعیب اختر سے کئی بار ان کی نوک جھنک ہوئی اور مقابلہ ہوا لیکن میدان کے باہر دونوں میں دوستی بھی تھی۔

ہربھجن سنگھ نے کہا: ’شعیب نے مجھے بہت گالیاں دی ہیں۔ وہ ہمارے ساتھ کھاتے اور بیٹھتے تھے کیونکہ وہ ہمارے کافی قریب تھے، اس لیے وہ شاید ہمیں ہلکے میں لیتے تھے۔‘

ہر بھجن نے مزید کہا: ’ایک بار انہوں نے مجھے چیلنج کیا کہ میں ان کی گیند پر چھکّا ماروں اور جب میں نے چھکّا جڑ دیا تو وہ دیکھتے ہی رہ گئے۔ اس کے بعد انہوں نے مسلسل دو باؤنسر پھینکے، جنھیں میں نے چھوڑ دیا۔ پھر انھوں نے مجھے گالی دی اور میں نے بھی جواب دیا۔ لیکن کھیل کے بعد ہم پھر سے ایک ساتھ بیٹھے اور کچھ نہیں ہوا۔‘

ہربھجن سنگھ بھارتی گیند باز سری سنت کو میدان میں ہی تھپڑ مارنے اور آسٹریلوی کرکٹ کھلاڑی اینڈریو سائمنڈ کے ساتھ توتو میں میں کرنے کے واقعے کے حوالے سے بھی بحث کا موضوع بن چکے ہیں۔

اسی بارے میں