امپائر بروس آکسنفورڈ کی حفاظتی شیلڈ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty

آسٹریلیا کے امپائر بروس آکسنفورڈ نے انگلینڈ اور سری لنکا کے درمیان ایجبیسٹن کے میدان پر کھیلے جانے والے دوسرے ایک روزہ کرکٹ میچ میں اپنے بائیں بازو پر حفاظتی شیلڈ پہن کر شرکت کی تھی۔

بروس بدھ سے ایجبیسٹن میں پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان تیسرے ٹیسٹ میچ میں بھی امپائر ہیں۔

وہ اس سے قبل انڈین پریمیئر لیگ کے سلسلے میں گجرات لائنز اور رائل چیلنجرز بنگلور کے درمیان کھیلے جانے والے میچ میں اور اس سے پہلے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے آسٹریلیا اور ویسٹ انڈیز کے وارم اپ میچ میں بھی یہ شیلڈ پہن چکے ہیں۔

* بلےبازوں کے لیے نئے ڈیزائن کے ہیلمٹ پہننا ضروری

* انگلش فرسٹ کلاس کرکٹ میں ہیلمٹ لازمی

* ’آسٹریلیا کھلاڑیوں کی حفاظت کے لیے اقدامات کرے گا‘

یہ پہلا موقع تھا جب ایک بین الاقوامی میچ میں حفاظتی ڈیوائس منظرِ عام پر آئی تھی جس کا بنیادی مقصد امپائرز کی حفاظت کو یقینی بنانے کی جانب پہلا قدم تھا۔

کرکٹ میں امپائر کی حفاظت کے لیے مزید اقدامات اٹھانے کا معاملہ سنہ 2014 میں اس وقت سامنے آیا تھا جب اسرائیل میں کھیلے جانے والے ایک لیگ میچ میں امپائر کے سر پر گیند لگنے کی ان کی موت واقع ہو گئی تھی۔

رواں برس کے آغاز میں آسٹریلیا کے امپائر جان وارڈ آسٹریلیا اور بھارت کے درمیان کھیلے جانے والے چوتھے ایک روزہ بین الاقوامی میچ کے دوران ہیلمیٹ پہننے والے پہلے امپائر بنے تھے۔

بروس آکسنفورڈ کی پولی کاربونیٹ شیلڈ کا وزن ایک کلو گرام وزنی اور چھ ملی میٹر موٹی ہے۔

اسی بارے میں