سری لنکا کا آسٹریلیا کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں وائٹ واش

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption ہیراتھ نے اس سیریز میں 28 وکٹیں حاصل کیں

سری لنکا نے آسٹریلیا کو سیریز کے آخری کرکٹ ٹیسٹ میچ میں بھی شکست دے کر تین میچوں کی سیریز تین صفر سے جیت لی ہے۔

یہ پہلا موقع ہے کہ سری لنکن ٹیم کسی ٹیسٹ سیریز میں آسٹریلیا کو تمام میچ ہرانے میں کامیاب ہوئی ہے۔

٭ میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

کولمبو میں کھیلے گئے میچ میں سری لنکا نے رنگنا ہیراتھ کی 13 وکٹوں کی بدولت مہمان ٹیم کو 163 رنز سے شکست دی۔

سری لنکا نے آسٹریلیا کو اس میچ میں فتح کے لیے 324 رنز کا ہدف دیا تھا لیکن اس کی پوری ٹیم صرف 160 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔

بدھ کو میچ کے پانچویں دن جب کھیل کا آغاز ہوا تو سری لنکا نے اپنی دوسری اننگز 347 رنز آٹھ کھلاڑی آؤٹ پر ڈیکلیئر کر دی۔

جواب میں آسٹریلیا کی جانب سے سوائے ڈیوڈ وارنر کے کوئی بھی بلے باز سری لنکن سپنرز کا مقابلہ نہ کر سکا۔

وارنر نے 68 رنز کی اننگز کھیلی جبکہ ان کے بعد اننگز میں دوسرا بڑا سکور 23 رنز تھا جو شان مارش اور مچل سٹارک نے بنایا۔

آسٹریلیا کے سات کھلاڑیوں کا سکور دوہرے ہندسوں تک بھی نہ پہنچ سکا۔

سری لنکا کے رنگنا ہیراتھ نے اس اننگز میں سات وکٹیں لیں اور میچ میں اپنی کل وکٹوں کی تعداد 13 کر لی۔

ہیراتھ نے اس سیریز میں مجموعی طور پر 28 وکٹیں حاصل کی ہیں۔

سری لنکا کے ہاتھوں اس شکست کے بعد اب آسٹریلیا کی ٹیم ٹیسٹ ٹیموں کی عالمی درجہ بندی میں پہلے سے تیسرے نمبر پر آ گئی ہے جبکہ انڈیا پہلی اور پاکستان دوسری پوزیشن پر چلا گیا ہے۔

ٹیسٹ ٹیموں کی عالمی درجہ بندی میں پہلی پوزیشن برقرار رکھنے کے لیے انڈیا کو ویسٹ انڈیز کے خلاف کھیلا جانے والا آخری ٹیسٹ میچ جیتا ہوگا۔

انڈیا کی شکست یا میچ کے ڈرا ہونے کی صورت میں پاکستان عالمی درجہ بندی میں پہلی بار سرفہرست آجائے گا۔

اسی بارے میں