اظہرعلی ون ڈے کرکٹ ٹیم کے کپتان برقرار

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے اظہرعلی کو کپتان برقرار رکھنے کے باضابطہ اعلان کے بعد وہ قیاس آرائیاں دم توڑ گئی ہیں جو انھیں کپتان کے عہدے سے ہٹائے جانے کے بارے میں انگلینڈ کے دورے کے بعد سے جاری تھیں

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اظہر علی کو ویسٹ انڈیز کے خلاف ون ڈے سیریز کے لیے پاکستانی ٹیم کا کپتان برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمد کے مطابق اظہر علی ویسٹ انڈیز کے خلاف متحدہ عرب امارات میں ہونے والی ون ڈے سیریز میں پاکستانی ٹیم کی قیادت کریں گے۔

سیریز کے پہلے دو میچز 30 ستمبر اور دو اکتوبر کو شارجہ میں کھیلے جائیں گے جبکہ تیسرا اور آخری ون ڈے پانچ اکتوبر کو ابوظہبی میں کھیلا جائے گا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کی جانب سے اظہرعلی کو کپتان برقرار رکھنے کے باضابطہ اعلان کے بعد وہ قیاس آرائیاں دم توڑ گئی ہیں جو انھیں کپتان کے عہدے سے ہٹائے جانے کے بارے میں انگلینڈ کے دورے کے بعد سے جاری تھیں۔

یاد رہے کہ پاکستان کو انگلینڈ کے خلاف ون ڈے سیریز میں چار میچوں کے مقابلے میں ایک سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption اظہر علی نے اب تک 25 ون ڈے انٹرنیشنل میچوں میں کپتانی کی ہے جن میں سے صرف نو میں انھیں کامیابی حاصل ہوئی ہے

اس نتیجے کے بعد اظہرعلی کی قیادت پر خاصی تنقید ہوئی تھی اور پاکستانی ذرائع ابلاغ نے یہ دعویٰ کیا تھا کہ پاکستان کرکٹ بورڈ اظہر علی کو کپتانی سے ہٹانے کے بارے میں غور کر رہا ہے لیکن پھر یہ خبریں آئیں کہ کوچ مکی آرتھر نے انھیں ایک اور موقع دینے کے لیے کہا ہے۔

اظہرعلی کو گذشتہ سال ورلڈ کپ کے بعد مصباح الحق کی جگہ ون ڈے ٹیم کی کپتانی سونپی گئی تھی تاہم وہ اس ذمہ داری کو نبھاتے ہوئے خاطر خواہ نتائج نہیں دے پائے ہیں۔

ان کی قیادت میں پاکستانی ٹیم زمبابوے کے خلاف دو جبکہ سری لنکا اور آئرلینڈ کے خلاف ایک ایک سیریز جیت پائی ہے جبکہ اسے انگلینڈ کے خلاف دو جبکہ نیوزی لینڈ اور بنگلہ دیش کے خلاف ایک ایک سیریز میں شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

اظہر علی نے اب تک 25 ون ڈے انٹرنیشنل میچوں میں کپتانی کی ہے جن میں سے صرف نو میں انھیں کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ پندرہ میچوں میں انھیں شکست ہوئی ہے اور ایک میچ نتیجہ خیز ثابت نہیں ہوا ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں