آمدنی میں اضافے کا طریقہ، سعودی عرب کی ویزہ فیس میں اضافہ

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

سعودی عرب کی جانب سے تیل کے علاوہ دیگر ذرائع سے ملکی آمدنی میں اضافے کے لیے کی جانے والی اصلاحات کے تحت حکام نے نئی ویزہ فیس کے نفاذ کا آغاز کر دیا ہے۔

مشرق وسطیٰ کے انگریزی اخبار گلف نیوز کے مطابق نئی ویزہ فیس متعارف کروانے کا فیصلہ گزشتہ ماہ سعودی کابینہ نے کیا تھا۔

نئی ویزہ پالیسی کے مطابق سنگل انٹری ویزہ حاصل کرنے کے خواہش مند افراد کو دو ہزار سعودی ریال فیس ادا کرنی پڑے گی۔

تاہم پہلی بار حج یا عمرہ کے لیے آنے والے لوگ اس فیس سے مستثنیٰ ہو ں گے۔

گلف نیوز کے مطابق سعودی حکام کا کہنا ہے کہ ملک میں رہنے والے غیر ملکی افراد کو ملک سے باہر جانے کے لیے دو سو ریال فیس دینی پڑی گی، یہ ویزہ دو ماہ کے لیے کارآمد ہوگا اور ملک سے باہر گزارے گئے ہر اضافی ماہ کے لیے سو ریال ادا کرنے پڑیں گے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

خیال رہے کہ مشرقِ وسطیٰ کے کچھ ممالک میں غیر ملکیوں کو ملک چھوڑنے کے لیے بھی ویزہ درکار ہوتا ہے۔

نئی پالیسی کے اطلاق سے قبل سنگل انٹری ویزے کی فیس پانچ سو ریال تھی۔

اس کے علاوہ چھ ماہ کے ملٹی پل ویزے کی فیس 500 ریال سے بڑہا کر 3000 ریال کردی گئی جبکہ ایک سال کے ویزے کی فیس 5000 ریال اور دو سال کے ملٹی پل ویزے کی فیس 8000 ریال کر دی گئی ہے۔

گلف نیوز کے مطابق دیگر عارضی ویزوں کی فیس میں بھی اضافہ کیا گیا ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں