برما میں تشدد، فوجی کارروائی، نقل مکانی
اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

برما میں تشدد، فوجی کارروائی، نقل مکانی

میانمار کی حکومت نے الزام لگایا ہے کہ شمالی صوبے رخائن میں دوبارہ سے تشدد کے واقعات پيش آئے ہيں جس کے ذمے دار شدت پسند ہیں۔ گزشتہ چند دنوں میں صوبے کے بعض علاقوں میں فوج کی کارروائیوں کی وجہ سے لوگوں نے نقل مکانی شروع کر دی ہے۔ اب تک کم از کم 26 افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاعات ہیں۔ اقوام متحدہ کے سابق سربراہ کوفی عنان کی سربراہی میں ایک پینل متاثرہ صوبے کے لیے حل تلاش کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔ لیکن ناقدین کو اس پینل سے کوئی زیادہ امیدیں نہیں ہیں۔