نائیجل فراج امریکہ میں برطانیہ کے اچھے سفیر ہوں گے: ٹرمپ

ڈونلڈ ٹرمپ اور نائیجل فراج تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption نائیجل فراج پہلے برطانوی سیاست دان ہیں جنھوں نے ڈونلڈ ٹرمپ کی امریکہ کے صدراتی انتخاب میں کامیابی کے بعد ان سے ملاقات کی تھی

امریکہ کے نو منتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے برطانوی دائیں بازو کی جماعت یوکِپ کے رہنما نائیجل فراج امریکہ میں برطانیہ کے اچھے سفیر ہوں گے۔

انھوں نے کہا 'متعدد افراد' نائیجل فراج کو امریکہ میں برطانیہ کا سفیر دیکھنا پسند کریں گے اور وہ ' اچھا کام' کریں گے۔

نائیجل فراج نے ڈونلڈ ٹرمپ کی امریکہ کے صدارتی انتخاب کی مہم کے دوران مدد کی تھی اور ان کا کہنا ہے کہ یہ تجویز ان کے لیے انتہائی حیران کن ہے۔ ’اگر میں برطانیہ کی کسی بھی طرح مدد کر سکا تو کروں گا۔'

ٹرمپ کی صدارت پر شہری کی حیثیت سے بات کروں گا: اوباما

ڈونلڈ ٹرمپ اور مٹ رومنی کی ’سود مند‘ ملاقات

واشنگٹن میں نئی امریکی انتظامیہ کے ارکان سے متعلق قیاس آرائیاں

دوسری جانب ٹین ڈاؤننگ سٹریٹ نے اس تجویز کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے 'وہاں کوئی جگہ خالی نہیں ہے۔'

ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹویٹ کی 'متعدد افراد نائیجل فراج کو امریکہ میں برطانیہ کا سفیر دیکھنا پسند کریں گے اور وہ اچھا کام کریں گے۔'

واضح رہے کہ نائیجل فراج برطانیہ کی دائیں بازو کی سیاسی جماعت یو کے انڈیپینڈنٹ پارٹی کے عبوری رہنما ہیں اور وہ پہلے برطانوی سیاست دان ہیں جنھوں نے ڈونلڈ ٹرمپ کی امریکہ کے صدراتی انتخاب میں کامیابی کے بعد ان سے ملاقات کرتے ہوئے کہا تھا کہ برطانیہ کے امریکہ کے ساتھ تجارتی تعلقات کو بہتر بنانے کا یہ 'حقیقی موقع' ہے۔

یو اے آئی پی کے رہنما نے کہا ' یہ خبر میرے لیے ایک جھٹکے کی طرح ہے۔ کسی نے بھی میرے ساتھ اس تجویز کا ذکر کیا تھا لیکن ڈونلڈ ٹرمپ کی ٹیم کے ساتھ میرے اچھے تعلقات ہیں اور اگر میں برطانیہ کی کسی بھی طرح مدد کر سکا تو کروں گا۔'

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption نائیجل فراج نے امریکہ کے صدارتی انتخاب کی مہم کے دوران ڈونلڈ ٹرمپ کی حمایت کی تھی

ان کا مزید کہنا تھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ ' اس ملک کے اچھے دوست ہیں۔'

واضح رہے کہ نائیجل فراج کی امریکہ کے نو منتخب صدر کے ساتھ ملاقات کو بعض حلقے برطانوی وزیر اعظم ٹیریسا مے کی تذلیل قرار دے رہے ہیں جو ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ آئندہ برس سے پہلے ملاقات نہیں کریں گی۔

امریکہ کے نو منتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے برطانوی وزیر اعظم ٹیریسا مے کے ساتھ فون پر بات کی ہے اس کے علاوہ برطانوی وزرا کے آنے والی امریکی انتظامیہ کے ساتھ بھی رابطے ہیں۔

امریکہ کے نو منتخب صدر کی ٹویٹ کے بارے میں بریگزٹ کے سیکریٹری ڈیوڈ ڈیوس کا کہنا تھا ' لوگوں کو جو اچھا محسوس ہوتا ہے وہ ایسا کہہ سکتے ہیں لیکن سادہ بات ہے کہ وہاں کوئی جگہ خالی نہیں ہے کیونکہ ہم نے دیکھا ہے کہ امریکہ میں برطانیہ کے سفیر بہت اچھے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا 'ہم آزائ اظہار پر یقین رکھتے ہیں اور کم ڈروچ واشنگٹن میں برطانیہ کے بہت اچھے سیفر اور وہ کئی برسوں سے وہاں ہیں۔'

ادھر ٹین ڈاؤننگ سٹریٹ کے ایک ترجمان کا کہنا ہے کہ وہاں کوئی جگہ خالی نہیں ہے اور واشنگٹن میں ہمارے بہترین سفیر موجود ہیں۔

بی بی سی کے سیاسی امور کے ڈپٹی ایڈیٹر نارمن سمتھ کا کہنا ہے کہ ٹین ڈاؤننگ بضد ہے کہ واشنگٹن میں نائیجل فراج کا کوئی کردار نہیں ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں