بغداد کے ایک بازار میں دو دھماکوں کے نتیجے میں 28 افراد ہلاک

عراق تصویر کے کاپی رائٹ AFP

عراق میں حکام کے مطابق دارالحکومت بغداد کے ایک مصروف بازار میں سنیچر کی صبح ہونے والے دو دھماکوں میں کم سے کم 28 افراد ہلاک اور 50 زخمی ہو گئے ہیں۔

سنیچر کی صبح ہونے والے یہ بغداد کی الا سیناک مارکیٹ میں ہوئے۔

عراق کے دو شہروں میں دھماکے، شیعہ زائرین سمیت 21 افراد ہلاک

بغداد میں خود کش حملہ، 30 افراد ہلاک

خود کو دولتِ اسلامیہ کہنے والی شدت پسند تنظیم نے ان دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس کے دو خود کش بمباروں نے یہ حملے کیے۔

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق وزارتِ داخلہ کا کہنا ہے کہ اس حملے میں ایک دھماکہ خودکش بمبار نے کیا جبکہ دوسرے کو جائے وقوع پر پہلے ہی رکھا گیا تھا۔

دولتِ اسلامیہ کی جانب سے بغداد میں دھماکوں کی ذمہ داری قبول کرنے کا اعلان ایک ایسے وقت کیا گیا ہے جب عراقی شہر موصل میں تنظیم کے خلاف سکیورٹی فورسز کا آپریشن جاری ہے۔

عراق میں موصل دولتِ اسلامیہ کا آخری گڑھ سمجھا جاتا ہے۔عراق کے دارالحکومت بغداد میں شدت پسندوں کے حملے ہوتے رہتے ہیں جن میں زیادہ تر عوامی مقامات کو نشانہ بنایا جاتا ہے۔

دولتِ اسلامیہ نے رواں برس بغداد میں کئی حملے کیے جن میں سینکڑوں افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں