شام کے فوجی اڈے پر ’اسرائیلی بمباری‘

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

شام نے اسرائیل ہر دمشق کے مغرب میں فوجی ہوائی اڈے پر بمباری کا الزام لگایا ہے۔

شام کے سرکاری ٹی وی چینل کے مطابق شامی فوج کا کہنا ہے کہنا ہے کہ مزۃ کے ہوائی اڈے پر کئی راکٹ گرے ہیں جس کے باعث آگ لگ گئی ہے۔

تاہم یہ واضح نہیں ہے کہ اس بمباری کے نتیجے میں کوئی جانی نقصان ہوا ہے۔

یاد رہے کہ ماضی میں بھی اسرائیل نے نہ تو شام میں فوجی کارروائی کی کبھی تصدیق کی ہے اور نہ ہی تردید۔

اندیشہ ظاہر کیا جاتا رہا ہے کہ اسرائیل نے شام میں 2011 میں شروع ہونے والی خانہ جنگی کے بعد کئی بار اس اسلحے کو نشانہ بنایا ہے جو حزب اللہ کے لیے روانہ کیا جانے والا تھا۔

شامی کی سرکاری خبر رساں ایجنسی کے مطابق مزۃ کے فوجی اڈے میں دھماکے ہوئے ہیں اور ایمبولینس اڈے کی جانب روانہ کر دی گئی ہیں۔

برطانوی خبر رساں ایجنسی روئٹرز کے مطابق شامی فوج نے اسرائیل کو اس حملے کے سنگین نتائج کی تنبیہہ کی ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں