پنجاب میں پشتونوں سے ’نسلی بنیادوں پر امتیازی سلوک‘؟
اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پنجاب میں پشتونوں سے ’نسلی بنیادوں پر امتیازی سلوک‘؟

پولیس نے راولپنڈی کے مختلف علاقوں میں مقیم قبائلی علاقوں سے تعلق رکھنے والے افراد پر کڑی نظر رکھنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس سلسلے میں وہاں مقیم قبائلیوں سے معلومات کے حصول کے لیے انھیں کچھ فارم بھی مہیا کیے گئے ہیں۔ دوسری جانب پنجاب کے دیگر علاقوں سے بھی پولیس اور سکیورٹی فورسز کی جانب سے پشتونوں کو ہراساں کیے جانے کی خبریں آ رہی ہیں۔ حکومت پنجاب نے اس پر معذرت بھی کی ہے لیکن حکام کا کہنا ہے کہ دہشت گردی کو جڑ سے اُکھاڑنے کے لیے اس طرح کے اقدامات ضروری ہیں۔ حال ہی میں انسانی حقوق کمیشن پاکستان نے بھی ایک بیان میں پنجاب میں پشتونوں کو ہراساں کیے جانے پر تشویش ظاہر کی تھی۔ دیکھیے ہمارے ساتھی خدائے نور ناصر کی رپورٹ۔