آسٹریلیا کا چکر لگانے کی کوشش: 12 سالہ لڑکا 1300 کلومیٹر ڈرائیو کرنے کے بعد گرفتار

بروکن ہل تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption خیال ظاہر کیا جا رہا ہے کہ لڑکے نے اتنے لمبے سفر کے لیے اس طرح کے راستوں کا استعمال کیا ہو

آسٹریلیا میں ایک 12 سالہ لڑکے کو پولیس نے 1300 کلومیٹر ڈرائیو کرنے کے بعد روک لیا ہے۔

وہ لڑکا بظاہر کار سے پورے آسٹریلیا کا چکر لگانے کے لیے نکل پڑا تھا۔

اسے نیو ساؤتھ ویلز میں بروکن ہل کے مقام پر سنیچر کو اس وقت روکا گیا جب پولیس گشتی پارٹی نے یہ دیکھا کہ کار کا بمپر زمین سے ٹکرا رہا ہے۔

'وعدہ کرتی ہوں آئندہ نہیں کروں گی'

پولیس نے بتایا کہ وہ لڑکا نیو ساؤتھ ویلز میں کینڈل کے مقام سے مغربی آسٹریلیا کے پرتھ تک چار ہزار کلومیٹر کا سفر طے کرنے کی کوششوں میں تھا۔

اسے حراست میں لے لیا گیا اور بروکن ہل پولیس سٹیشن لے جایا گیا۔

اس بچے کے والدین نے اس کی گمشدگی کی رپورٹ درج کروا رکھی تھی اور گرفتاری کے بعد انھوں نے اتوار کو اسے پولیس سٹیشن سے حاصل کیا۔

انسپیکٹر کم فیہون نے آسٹریلیا کے ایسوسی ایٹیڈ پریس کو بتایا کہ 'وہ والدین کی کار لے کر بھاگا تھا۔‘

'ان کے والدین نے اس کے گھر سے نکلنے کے فورا بعد ہی اس کی گمشدگی سے متعلق رپورٹ درج کرادی تھی اور اس کی تلاش میں تھے۔'

یہ واضح نہیں کہ اس نے تہنا اتنا لمبا سفر کیسے طے کیا۔ اس نے پورے نیوساؤتھ ویلز کو عبور کیا اور کسی نے اسے نوٹس بھی نہیں کیا۔ اس دوران وہ دور دارز کے سخت اور دشوار گزار علاقوں سے بھی گزرا۔

نیو ساتھ ویلز کے ایک پولیس ترجمان نے بی بی سی کو بتایا کہ اس پر اطفال کی غلطیوں کے قانون کے تحت چارجز لگائے جا سکتے ہیں۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں