’امریکہ میں تمام بین الاقوامی پروازوں پر لیپ ٹاپ لے جانے پر پابندی لگانے پر غور‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

امریکی ہوم لینڈ سکیورٹی کے سربراہ نے کہا ہے کہ امریکی انتظامیہ جہازوں پر لیپ ٹاپ لے جانے پر پابندی تمام بین الاقوامی پروازوں پر لگانے کی تجویز پر غور کر رہی ہے۔

جان کیلی نے یہ بات فوکس نیوز کے پراگرام پر کہی۔

ہوم لینڈ سکیورٹی کے سربراہ جان کیلی کا کہنا ہے کہ دہشت گردی کا خطرہ ہے اور دہشت گرد امریکی جہاز گرانے کی منصوبہ بندی کر رہے ہیں۔

جہازوں میں الیکٹرانکس لانے پر پابندی کا اطلاق شروع

الیکٹرانکس آلات پر پابندی کی وجہ ’دولت اسلامیہ کا خطرہ‘

’ملک سے باہر جاتے وقت موبائل گھر چھوڑیں‘

یاد رہے کہ امریکی حکومت نے پہلے ہی آٹھ مسلمان مسلم ممالک سے آنے جانے والی پروازوں پر لیپ ٹاپ لے جانے پر پابندی عائد کر رکھی ہے۔

دو ہفتے قبل ہی فیصلہ کیا گیا تھا کہ امریکہ اور یورپی یونین کا حصہ ممالک کے درمیان پروازوں پر یہ پابندی عائد نہیں کی جائے گی۔

تاہم جان کیلی کے اس بیان نے اس فیصلے پر شکوک و شبہات پیدا کیے ہیں۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

جان کیلی سے جب پوچھا گیا کہ کیا تمام بین الاقوامی پروازوں پر لیپ ٹیپ لے جانے پر پابندی عائد کر دی جائے گی تو انھوں نے جواب دیا 'میں شاید لگا دوں۔ ہم انٹیلیجنس رپورٹیں حاصل کر رہے ہیں۔ یہ ایک جدید ترین خطرہ ہے اور میں اس بارے میں حتمی طور پر ابھی کچھ نہیں کہوں گا۔'

یاد رہے کہ مارچ میں امریکہ کی جانب سے لگائی جانے والی پابندیاں سمارٹ فون سے بڑی ڈیوائس پر ہیں۔ ترکی، مراکش، اردن، مصر، متحدہ عرب امارات، قطر، شعودی عرب اور کویت سے امریکہ جانے والی پروازوں پر ڈیوائس جیسے کہ لیپ ٹاپ وغیرہ ہاتھ میں لے کر سفر کرنے پر پابندی ہے۔

ارمیکہ کی جانب سے لگائی جانے والی پابندی کے بعد برطانیہ نے بھی پابندی عائد کر دی تھی۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں