ملائشیئن ایئر لائن میں مسافر کی زبردستی کاک پٹ میں گھسنے کی کوشش

تصویر کے کاپی رائٹ ANDREW LEONCELLI

میلبورن سے کالالمپور جانے والی ملائشیئن ایئر لائن کی فلائٹ ایم ایچ 128 کو اس وقت جبراً واپس موڑنا پڑا جو ایک شخص نے زبردستی کاک پٹ میں داخل ہونے کی کوشش کی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ پرواز کو بحفاظت اتار لیا گیا اور اس واقعے کا دہشت گردی سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

ایک مسافر کا کہنا ہے کہ جہاز میں سوار ایک شخص ایک غیر معمولی چیز لے کر جا رہا تھا جس کے بارے میں پولیس کا کہنا ہے کہ یہ دھماکہ خیز مواد نہیں تھا۔

عینی شاہد اینڈریو لیونسلی نے بی بی سی کو بتایا کہ ’وہ نشستوں کے درمیانی کی رساتے کی طرف بھاگا اتنے مںی تین بہادر لوگوں نے اس کے ساتھ لگ بھگ کشتی کر کے اسے قابو کر لیا۔‘

تصویر کے کاپی رائٹ ANDREW LEONCELLI

وکٹوریا پولیس چیف کمشنر گراہم ایشٹن کا کہنا ہے کہ 25 سالہ مشتبہ شخص کو بدھ کے روز ہی میلبورن کے نفسیاتی سنٹر سے آزاد کیا گیا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ ’پولیس نے اس واقعے کو پہلے تو ممکنہ دہشت گردی کے طور پر لیا تاہم اب واضح ہوا ہے کہ یہ ذہنی صحت کے مسئلہ ہے۔‘

پولیس کا کہنا ہے کہ یہ شخص بلیو ٹوتھ سپیکر یا اس سے ملا جلا آلہ لے کر جا رہے تھے۔ ملائشیا کے ڈپٹی ٹرانسپورٹ منسٹر نے بتایا کہ یہ آلہ کو پاور بینک تھا۔

اسی بارے میں