مانچیسٹر حملہ: ’والدہ کو بیٹی کی موت کی خبر دے دی گئی‘

تصویر کے کاپی رائٹ PA
Image caption سیفی روسوس اپنی والدہ لیزا اور بڑی بہن کے ساتھ کانسرٹ دیکھنے گئی تھیں۔

مانچسیٹر ارینا میں ہونے والے حملے میں ہلاک ہونے والی سب سے کم عمر بچی کی والدہ کو اس کی ہلاکت کی خبر دے دی گئی ہے۔

آٹھ سالہ سیفی روسوس کی والدہ بھی حملے میں شدید زخمی ہوئی تھیں اور لائف سپورٹ سسٹم پر تھیں۔

’مانچسٹر دھماکے کے بعد میرا دل ٹوٹ گیا ہے‘

’نفرت سے نفرت کو ختم نہیں کیا جا سکتا‘

بی بی سی کو معلوم ہوا ہے کہ لائف سپورٹ سسٹم اتارنے کے بعد انہیں ان کی بیٹی کی موت کی اطلاع دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ 22 مئی کی شب گلوکارہ آریانا گرینڈے کے مانچیسٹر ارینا میں کنسرٹ کے اختتام پر ہونے والے خودکش حملے میں 22 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption آریانا گرینڈے جو اس حملے میں محفوظ رہیں نے ایک ٹویٹ کے ذریعے کہا کہ ’افسردہ، دلی طور پر، میں معذرت خواہ ہوں، میرے پاس الفاظ نہیں ہیں۔'

سیفی روسوس اپنی والدہ لیزا اور بڑی بہن کے ساتھ کانسرٹ دیکھنے گئی تھیں۔

اس فیملی کے ایک دوست مائیک سوانی نے بتایا ہے کہ والدہ اور بہن ابھی بھی ہسپتال میں ہیں لیکن خطرے سے باہر ہیں۔

اطلاعات کے مطابق سیفی روسوس کی والدہ کی حالت تشویش ناک تھی اور وہ لائف سپورٹ سسٹم پر تھیں۔

فیملی کے دوست مسٹر سوانی نے ’لی لینڈ میموریز‘ نامی فیس بک گروپ پر ایک پیغآم میں لکھا ہے کہ مسز روسوس اب ہوش میں ہیں اور سرجری سے باہر آچکی ہیں۔ انہوں نے مزید لکھا کہ اب اب وہ ‘صورتحال سے پوری طرح آگاہ ہیں۔‘

انہوں نے لکھا کہ ’ان کی بڑی بیٹی ایشلی بھی اب خطرے سے باپر ہیں اور اپنی والدہ سے بات کر رہی ہیں۔‘

’اب انہیں اپنی زندگیوں کو پھر سے شروع کرنا ہوگا‘

’مجھے امید ہے کہ اس خبر کو سن کر سب مسکرائیں گے کیوں کہ یہ اس سانحے کے بعد آنے والی بہترین خبر ہے‘

اسی بارے میں