سعودی عرب میں گائے کہنے پر بیوی کا شوہر پر مقدمہ

عدالت تصویر کے کاپی رائٹ Saudigazette

سعودی عرب میں ایک خاتون نے اپنے شوہر کے خلاف بدکلامی کرنے پر مقدمہ دائر کیا ہے۔

سعودی عرب پینل کورٹ نے ضلعے کے میئر کو سرکاری طور پر ایک خط لکھا ہے جس میں ان سے کہا گیا ہے کہ وہ اس عورت کے شوہر کو آئندہ پیشی کے موقع پر عدالت میں طلب کریں جو دو ہفتوں کے اندر اندر ہو گی۔

بحرین میں شہریوں پر فوجی عدالت میں مقدمہ چلانے کی منظوری

اخبار سعودی گیزٹ کے مطابق پہلے مصالحتی کمیٹی اس تنازع کو حل کرنے کی کوشش کرے گی اور اگر وہ اس میں ناکام رہتی ہے تو پھر عدالت اس مقدمے کو سنے گی۔

سعودی خاتون نے اپنے شوہر کے خلاف دائر مقدمے میں دعویٰ کیا ہے کہ ان کا شوہر ان کے ساتھ زبانی طور پر بد سلوکی کرتا ہے اور انھیں 'گائے، 'گدھی' اور دوسرے ناموں سے پکارتا ہے۔

سعودی عرب میں قائم ایسی عدالتوں کے مطابق انھیں موصول ہونے والے 25 فیصد مقدمات بد کلامی یا نسلی طور برا بھلا ہونے سے متعلق ہوتے ہیں۔

سعودی عرب میں بدکلامی کے مقدمات کی شرح بڑھ جانے پر عدالت خوش نہیں ہے۔ اس کا موقف ہے کہ اس سے نجی حقوق کی خلاف ورزی کرنے اور فوری نوعیت کے مقدمات سے اس کی توجہ تقسیم ہو جاتی ہے۔

وکیل صالح الغامدی کا کہنا ہے کہ آج کل سوشل میڈیا کی ویٹ سائٹس ایک دوسرے کے خلاف بدکلامی کرنے کا ایک بڑا ذریعہ بن گئی ہیں۔

اسی بارے میں