خفیہ معلومات افشا کرنے کے شبہے میں امریکی کنٹریکٹر گرفتار

امریکی ٹھیکے دار تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

امریکہ میں ایک سرکاری کنٹریکٹر کو ایک خبر رساں ادارے کو انتہائی خفیہ معلومات لیک کرنے کے شبہے میں گرفتار کیا گیا ہے۔

25 سالہ ریئلٹی لی ونر نے مبینہ طور پر امریکی ریاست جارجیا کی سرکاری تنصیب سے خفیہ دستاویزات لیں۔

امریکی انتخاب میں روسی مداخلت: تفصیلی رپورٹ جاری

امریکی انتخاب: 'روسی ہیکنگ' کی تحقیقات کا حکم

امریکہ ہیکنگ کے ثبوت لائے یا پھر خاموش رہے: روس

ان کے خلاف یہ الزامات اس وقت لگائے گئے ہیں جب نیوز آؤٹ لیٹ انٹرسیپٹ نے نیشنل سکیورٹی ایجنسی کی جانب سے امریکی سیاست میں روسی مداخلت کی خبر شائع کی۔

امریکی محکمۂ انصاف کا کہنا ہے کہ لی ونر کو تین جون کو گرفتار کیا گیا تھا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

این بی سی نیوز کے مطابق لی ونر پلوریبس انٹرنیشنل کارپوریشن کے ساتھ ایک کنٹریکٹر ہیں اور انھوں نے فروری میں جارجیا میں این ایس اے میں کام کیا تھا۔

این بی سی نیٹ ورک کے مطابق لی ونر کو 'معلومات اکٹھی کرنے، ترسیل یا دفاعی معلومات کھونے' کے الزامات کا سامنا ہے۔

انٹرسیپٹ کی جانب سے شائع کی جانے والی خبر کے مطابق ماسکو کی ملٹری انٹیلیجنس سروسز نے گذشتہ برس نومبر میں ہونے والے امریکی صدارتی انتخاب سے کم از کم ایک ہفتہ پہلے مبینہ طور پر ایک امریکی ووٹنگ سافٹ ویئر سپلائر پر سائیبر حملوں کی کوشش کی۔

تاہم اس دستاویز میں ہیکروں کی کامیابی کے حوالے سے کچھ نہیں کہا گیا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں