میلانيا ٹرمپ اپنے بیٹے کے ساتھ پانچ ماہ بعد وائٹ ہاؤس منتقل

ٹرمپ اور ان کی اہلیہ تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے عہدہ صدارت سنبھالنے کے پانچ ماہ بعد ان کی بیوی میلانيا ٹرمپ اور ان کے بیٹے بیرن وائٹ ہاؤس میں منتقل ہو گئے ہیں۔

میلانيا ٹرمپ صدر ٹرمپ کے ساتھ وائٹ ہاؤس میں منتقل نہیں ہوئی تھیں بلکہ اپنے 11 سالہ بیٹے بیرن کے ساتھ نیویارک میں رہائش پذیر رہیں تاکہ ان کا بیٹا اپنی تعلیمی سال مکمل کر لے۔

٭ امریکہ کی نئی ’فرسٹ فیملی‘

٭ امریکہ کی دوسری 'فرسٹ لیڈی'

٭میرے خاوند شریف انسان ہیں: میلانیا ٹرمپ

صدر ٹرمپ کے پیشرو صدر اوباما کی اہلیہ مشعل اوباما اپنے خاوند کے عہدہ صدارت سنبھالنے سے پہلے ہی واشنگٹن میں منتقل ہو گئی تھیں تاکہ ان کی بیٹیوں کا سکول شروع ہو سکے اور وہاں خود کو ماحول کے مطابق ڈھال سکیں۔

میلانيا ٹرمپ نے وائٹ ہاؤس میں منتقل ہونے پر مسرت کا اظہار کیا ہے اور انھوں نے کمرے سے وائٹ ہاؤس کے لان کی تصویر ٹویٹر پر پوسٹ کی ہے۔

نیویارک کے شہری بھی میلانيا ٹرمپ کی وائٹ ہاؤس منتقلی پرخوش ہوں گے کیونکہ شہر میں واقع ٹرمپ ٹاور میں رہائش پذیر خاتون اول کی سکیورٹی انتظامات پر خطیر رقم خرچ ہو رہی تھی۔

اس کے علاوہ سکیورٹی انتظامات کی وجہ سے ٹریفک کے مسائل بھی پیدا ہو رہے تھے۔ اخبار نیوریارک پوسٹ نے خبردار کیا تھا کہ' اگر یہاں سے منتقل نہیں ہوتے تو ٹریفک کا نظام ابتر ہونے کا خاصا امکان ہے۔'

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں