ہٹلر کا سلیوٹ کرنے کے الزام میں دو چینی گرفتار

جرمن پارلیمان تصویر کے کاپی رائٹ REUTERS
Image caption ان سیاحوں کو جرمن پارلیمان کے باہر موبائل فون سے ایک دوسرے کی تصاویر لیتے دیکھا گیا تھا

ہفتے کے روز دو چینی سیاحوں کو جرمنی کے شہر برلن میں پارلیمان کے باہر نازی طرز کا سلیوٹ کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔

ان چینی مردوں کے خلاف ممنوعہ تنظیم کی علامات استعمال کرنے کے الزام میں مجرمانہ کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔

فی الحال انھیں 500 یورو فی کس کی ضمانت پر رہا کر دیا گیا ہے۔

جرمنی میں نفرت انگیز اظہار اور ہٹلر اور نازیوں سے متعلق علامات کے استعمال کے بارے میں سخت قوانین ہیں۔

پولیس کے مطابق ان دو مردوں کو تین سال تک کی سزا اور جرمانہ ہو سکتا ہے۔

کٹر دائیں بازو سے تعلق رکھنے والے کارکنوں پر بھی اسی قسم کے مقدمات چلائے جاتے ہیں۔

پولیس کے ایک ترجمان نے خبررساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ یہ لوگ جرمنی سے جا سکتے ہیں اور اگر ان پر جرمانہ عائد کیا گیا تو ممکنہ طور پر ان کی ضمانت کی رقم سے وہ پورا ہو جائے گا۔

ان سیاحوں کو جرمن پارلیمان کے باہر موبائل فون سے ایک دوسرے کی تصاویر لیتے دیکھا گیا تھا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں