ٹرمپ کی کِم کو دھمکی: 'میرا جوہری بٹن بڑا اور طاقتور ہے اور کام بھی کرتا ہے'

صدر ٹرمپ تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے شمالی کوریا کی دھمکی کے جواب میں زیادہ سخت جواب دیا ہے۔

انھوں نے ٹویٹ کیا ہے کہ ان کے پاس شمالی کوریا کے جوہری ہتھیار سے زیادہ بڑا بٹن ہے۔

انھوں نے لکھا: 'شمالی کوریا کے رہنما کم جونگ ان نے حال ہی میں کہا کہ ان کی 'میز پر ہمہ وقت جوہری بٹن رہتا ہے۔' ان کی مفلوک الحال اور بھوکی حکومت میں سے انھیں کوئی بتائے کہ ایک جوہری بٹن میرے پاس بھی ہے، لیکن میرا والا ان سے بہت بڑا اور طاقتور ہے اور میرا بٹن کام بھی کرتا ہے۔'

خیال رہے کہ اس سے قبل شمالی کوریا کے رہنما نے نئے سال کے موقعے پر اپنے ٹی وی خطاب میں کہا تھا کہ 'امریکہ کبھی بھی جنگ کا آغاز نہیں کر سکتا ہے' کیونکہ جوہری ہتھیار چلانے کا بٹن ہر وقت اُن کی میز پر موجود ہوتا ہے۔‘

یہ بھی پڑھیے

٭ ’ہمیں مت آزمائیں‘، ٹرمپ کی شمالی کوریا کو تنبیہ

٭ جوہری ہتھیار چلانے کا بٹن ہر وقت میز پر ہوتا ہے: کم جونگ ان

انھوں نے کہا کہ پورا امریکہ شمالی کوریا کے جوہری ہتھیاروں کی پہنچ میں ہے۔ اس کے ساتھ انھوں نے یہ بھی کہا کہ 'یہ حقیقت ہے، کوئی دھمکی نہیں۔'

تاہم اس کے ساتھ ہی کم جونگ ان نے جنوبی کوریا کے لیے زیتون کی ایک مضبوط شاخ کی پیشکش کی جس کا مطلب یہ ہے کہ وہ مذاکرات کے لیے تیار ہیں۔

ٹوئٹر پر شمالی کوریا کے لیے صدر ٹرمپ کے انتہائی ذاتی پیغام سے قبل اقوام متحدہ میں امریکہ کی سفیر نکی ہیلی نے شمالی کوریا اور جنوبی کوریا کے درمیان مجوزہ مذاکرات کو 'بینڈ ایڈ' (ایک قسم کی مرہم پٹی) کہا تھا اور یہ کہا تھا کہ واشنگٹن کبھی بھی جوہری اسلحے سے لیس پیانگ یانگ کو قبول نہیں کر سکتا۔

بہرحال جنوبی کوریا نے شمالی کوریا کے رہنما کے پیغام کو مثبت انداز میں لیتے ہوئے نو جنوری کی تاريخ کو جزیرہ نما کوریا میں کشیدگی کم کرنے کے لیے نادر موقع قرار دیا تھا لیکن امریکہ نے ان مذاکرات کی سنجیدگی پر سوال کھڑا کر دیا ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

بہرحال صدر ٹرمپ اور کم جونگ ان کے بیانوں پر لوگوں نے سوشل میڈیا پر تشویش ظاہر کی ہے کہ کس طرح جوہری ہتھیار کے حامل دو رہنما ایسی ہلکی باتیں کر سکتے ہیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل کم جونگ ان نے صدر ٹرمپ کو 'احمق' یا 'پیر فرتوت' کہا تھا جبکہ صدر ٹرمپ نے شمالی کوریا کے رہنما کو 'لٹل راکٹ مین' کہا تھا۔

یہ بھی پڑھیے

٭ 'اب ایسا نہیں ہوگا‘، ڈونلڈ ٹرمپ کا شمالی کوریا کو پیغام

٭ شمالی کوریا کے رہنما کم جونگ ان بہت ہوشیار ہیں: ڈونلڈ ٹرمپ

٭ ’امریکی فوج شمالی کوریا سے نمٹنے کے لیے تیار ہے‘

٭ جدید ترین ہائیڈروجن بم تیار کر لیا : شمالی کوریا

مرفی پولز نامی ایک صارف نے صدر ٹرمپ کو ٹیگ کرتے ہوئے لکھا: 'ایک جوہری جنگ مذاق نہیں ہے۔ آپ یہ شیخی نہیں بگھاڑ سکتے کہ میرے میز پر پر بھی بٹن ہے جس سے دنیا میں جوہری جنگ چھڑ سکتی ہے۔'

لیکن مسٹر ٹرمپ کے حامیوں نے ان کا دفاع کیا ہے کہ ان کا بیان حقیقت پر مبنی ہے اور اس سے امریکہ کی طاقت اور ارادے کا مظاہرہ ہوتا ہے۔

ٹرنکٹس1963 نےٹویٹ کیا: 'ٹرمپ آپ اپنا بڑا بٹن دبا دیں۔ یہ صحیح وقت ہے کہ شمالی کوریا کو دکھا دیں کہ امریکہ کون ہے۔'

اسی بارے میں