ارزگان، دھماکے میں سات افراد ہلاک

Image caption اتوار کو صوبہ پروان کے گورنر کے کمپاؤنڈ پر چھ خود کش حملہ آوروں کے حملے میں بیس افراد ہلاک ہو گئے تھے

افغانستان کے صوبے ارزگان میں حکام کے مطابق ایک بم دھماکے میں کم از کم سات افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ ایک بازار میں ہونے والے بم دھماکے میں متعدد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔

خیال کیا جا رہا ہے کہ بم ایک موٹر سائیکل میں نصب کیا گیا تھا اور روزہ افطار ہونے سے کچھ دیر پہلے پھٹ گیا۔

افغانستان: پہلے چھ ماہ میں 1462 عام شہری ہلاک

امریکی خبر رساں ادارے اے پی کے مطابق صوبائی کونسل کے ڈائریکٹر امان اللہ اوطاق کا کہنا ہے کہ دھماکے کے نتیجے میں آٹھ افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوئے ہیں۔

صوبائی حکومت کے ترجمان حامد میلاد مدثر نے دھماکے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہلاک ہونے والے افراد کی صحیح تعداد نہیں بتائی جا سکتی ہے کیونکہ دھماکے کے فوری بعد ہلاک ہونے والے افراد کے عزیز ان کی لاشیں اپنے ساتھ لے گئے ہیں۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق ضلعی ہیلتھ افسر خان آقا مایاخیل نے بتایا کہ دھماکے کے بعد آٹھ افراد کو ہسپتال منتقل کیا گیا اور ان کے پاس سات ہلاکتوں کی اطلاعات ہیں۔

خبر رساں ادارے اے پی کے مطابق صوبہ قندھار میں پیش آنے والے ایک دوسرے واقعے میں ایک مسلح شخص نے افغان حکومت کے لیے کام کرنے والی ایک خاتون کو فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا۔

رابعہ سادات نامی خاتون کے والد نے بتایا کہ ان کی بیٹی کو اس وقت فائرنگ کر کے ہلاک کیا گیا جب وہ منگل کی صبح کام پر جانے کے لیے گھر کے باہر کھڑی گاڑی میں سوار ہونے لگی تھیں۔

واضح رہے کہ اتوار کو افغانستان میں صوبہ پروان کے گورنر کے کمپاؤنڈ پر چھ خود کش حملہ آوروں کے حملے میں بیس افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

اسی بارے میں