امریکی دفاعی بجٹ میں بچت کا منصوبہ

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption امریکی وزیر دفاع مسلح افواج کی تعداد اور اسلحے کی خریداری میں کمی کی تجویز پیش کرنے والے ہیں

امریکی وزیر دفاع لیون پنیٹا نے قومی دفاعی بجٹ میں بچت کے منصوبے کا اعلان کیا ہے جس پر عمل کر کے امریکہ آئندہ دس برس میں دفاعی بجٹ میں ساڑھے چار سو ارب ڈالر کی کٹوتی کرے گا۔

مبصرین اس منصوبے کو امریکہ کے دفاعی بجٹ میں ہونے والی تاریخی کٹوتی قرار دے رہے ہیں۔

امریکی اخبار نیویارک ٹائمز کے مطابق وزیر دفاع اس دوران ان مدوں میں بھی کٹوتی کے بارے میں غور کر رہے ہیں جنہیں مقدس سمجھا جاتا تھا اور کوئی بھی حکومت اس میں کمی کے بارے میں تجویز پر غور بھی نہیں کرتی تھی۔

تاہم بتایا جاتا ہے کہ لیون پنیٹا وزارت دفاع کے ملازمین کی جن میں امریکی فوجی بھی شامل ہیں، پنشنز اور طبی سہولیات میں بھی کمی کا سوچ رہے ہیں۔

اخبار کے مطابق امریکی وزیر دفاع مسلح افواج کی تعداد میں کمی اور اسلحے کی خریداری میں بھی کمی کی تجویز پیش کرنے والے ہیں۔

یاد رہے کہ دس سال پہلے امریکہ پر ہوئے دہشت گرد حملوں کے بعد سے اس کا دفاعی بجٹ دوگنا ہو چکا ہے۔ امریکہ کا دفاعی بجٹ گیارہ ستمبر دو ہزار ایک میں ساڑھے تین سو ارب ڈالر تھا۔

اسی بارے میں