’یورینیم افزودگی،ری ایکٹر کی تعمیر جاری‘

Image caption ’ری ایکٹر کے لیے کم افزودہ یورینیم تیار کی جا رہی ہے‘

شمالی کوریا کا کہنا ہے کہ وہ یورینیم کی افزودگی اور ہلکے پانی کے جوہری ری ایکٹر کی تعمیر کا کام تیزی سے جاری رکھے ہوئے ہے۔

امریکہ اور جنوبی کوریا نے اس معاملے پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے اپنے ان خدشات کو دہرایا ہے کہ یہ عمل شمالی کوریا کے لیے جوہری ہتھیاروں کی تیاری کے سلسلے میں مددگار ثابت ہو سکتا ہے جبکہ شمالی کوریا کا کہنا ہے کہ اس کا جوہری پروگرام بجلی پیدا کرنے کے لیے ہے۔

شمالی کوریا کے سرکاری ذرائع ابلاغ نے وزارتِ خارجہ کے حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ ری ایکٹر کے لیے کم افزودہ یورینیم تیار کی جا رہی ہے۔

خبر رساں ادارے کے سی این اے کے مطابق شمالی کوریا کے حکام کا کہنا تھا کہ ’ہلکے پانی کے تجرباتی ری ایکٹر کی تعمیر اور اس کے لیے کم افزودہ یورینیم کی تیاری کا کام تیزی سے جاری ہے‘۔

حکام نے اس ری ایکٹر کی تعمیر کو ’اپنے آپ پر انحصار کرنے والی قومی معیشت‘ کی تعمیر کا حصہ قرار دیا ہے۔

امریکی وزیرِ خارجہ اس وقت جنوبی کوریا کے دورے پر ہیں اور تجزیہ کاروں کے نزدیک شمالی کوریا کی جانب سے یہ اعلان امریکہ کے لیے ایک پیغام ہے۔

شمالی کوریا نے سنہ 2005 میں امداد کے بدلے اپنا جوہری پروگرام روکنے پر اتفاق کیا تھا اور وہ چار سال تک چھ ممالک کے ساتھ مذاکرات میں شامل رہا تھا۔

تاہم اپریل سنہ دو ہزار نو میں اس نے مذاکرات سے علیحدہ ہونے کا اعلان کیا تھا اور اس کے ایک ماہ بعد جوہری تجربہ کر لیا تھا۔

اسی بارے میں