ایران: امریکی شہری کو سزائے موت

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

ایران کے ذرائع ابلاغ کے مطابق تہران کی ایک عدالت نے ایرانی نژاد امریکی شہری کو امریکہ کے لیے جاسوسی کرنے کے الزام میں موت کی سزا دی ہے۔

ایران کے نیم خبر رساں ادارے فارس نیوز کے مطابق امریکی شہری عامر میرزئی حکمتی پر امریکہ سے تعاون، امریکی خفیہ ادارے سی آئی اے کے لیے جاسوسی کرنے اور ایران کو دہشت گردی میں ملوث کرنے کی کوشش کا الزام ہے۔

اٹھائیس سالہ عامر میرزئی کے خلاف گزشتہ ماہ عدالتی کارروائی شروع ہوئی تھی اور ان کے بارے میں بارے میں اعتراف جرم کرنے کی اطلاعات سامنے آئیں تھیں۔

امریکہ میں مقیم عامر کے اہلحانہ کا کہنا ہے کہ وہ ایران میں اپنی دادی اور نانی سے ملنے گئے تھے۔

امریکہ نے عامر پر لگائے گئے الزامات کو جھوٹا قرار دیتے ہوئے ان کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا ہے۔

خیال رہے کہ گزشتہ ماہ انیس دسمبر کو ایران میں سرکاری ٹی وی چینل پر عامر میرزئی کی ویڈیو دکھائی گئی تھی۔

اس ویڈیو میں دکھایا جانے والا شخص اپنا نام عامر میرزئی حکمتی بتایا تھا جبکہ ان کا امریکی فوج کا شناختی کارڈ بھی دکھایا گیا اور اس کے ساتھ کچھ تصاویر بھی دکھائی گئی ہیں جن میں اسے افغانستان میں امریکی فوج کے ساتھ تربیت کرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

اس مبینہ امریکی جاسوس کا کہنا ہے کہ اس کا مشن ایرانی حکومت کی کسی وزارت میں داخل ہونا تھا۔

سرکاری ٹی وی پر کیے گئے دعوے کے مطابق یہ شخص ایرانی نژاد ہے مگر امریکہ کی ریاست ایرئزونا میں پیدا ہوا تھا۔

اسی بارے میں