تیرہ لاکھ گاڑیاں واپس منگوانے کا اعلان

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

جرمن کار کمپنی بی ایم ڈبلیو نے دنیا بھر سے اپنی تیرہ لاکھ گاڑیاں واپس منگوانے کا اعلان کیا ہے۔

جرمن کمپنی نے ان گاڑیوں کی بیٹری میں خرابی کی اطلاعات کے باعث یہ فیصلہ کیا ہے۔

بی ایم ڈبلیو کے مطابق انتہائی شدید حالات میں ان گاڑیوں کی بیٹری میں آگ لگ سکتی ہے۔

چھ اور پانچ سیریز کی یہ گاڑیاں سال دو تین سے دو ہزار دس کے درمیان تیار کی گئی تھیں۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ انھیں بیٹریوں میں نقص کی نو اطلاعات ملی ہیں تاہم ان واقعات میں کسی شخص کے زخمی ہونے کی اطلاع نہیں ملی ہے۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ مالکان اپنی گاڑیوں کو نقص ٹھیک کرانے کے لیے مجاز ڈیلرز کے پاس لیجائیں۔

کمپنی کے مطابق ہو سکتا ہے کہ بیٹریوں کی تاروں کے کور ٹھیک طرح نصب نہ ہوئے ہوں۔

بی ایم ڈبلیو کی جانب سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ’ کوالٹی کے معیار کو برقرار رکھنے کے لیے بی ایم ڈبلیو کی تیار کردہ پانچ اور چھ سیریز کی گاڑیوں کو مرمت کے لیے مجاز ڈیلرز کے پاس بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، ان گاڑیوں کے ماڈل سال دو ہزار تین سے سال دو ہزار دس کے درمیان تیار کیے گئے تھےاور یہ اب بھی مارکیٹ میں موجود ہیں۔‘

بیان کے مطابق نقص کی وجہ سے گاڑیوں کے الیکڑک سٹسم میں خرابی آ سکتی ہے، گاڑیاں سٹارٹ نہیں ہو سکتیں اور بعض معاملات میں چارچنگ کرنا چھوڑ سکتی ہیں یا آگ لگ سکتی ہے۔

کمپنی کے مطابق گاڑیاں کے مالکان کو خطوط لکھے جائیں گے اور گاڑی کے معائنے میں صرف تیس منٹ لگیں گے اور یہ سروس مفت فراہم کی جائے گی۔

رواں ماہ کے آغاز پر بی ایم ڈبلیو نے گاڑیوں کے کاروبار میں ریکارڈ منافعے کا اعلان کیا تھا۔

اسی بارے میں