افغان فوجی کے ہاتھوں دو نیٹو اہلکار قتل

تصویر کے کاپی رائٹ AP

افغانستان میں تعینات نیٹو فورسز کا کہنا ہے کہ افغان فوج کی وردی میں ملبوس ایک شخص نے بین القوامی فوج کے دو اہلکاروں کو گولیاں مار کر ہلاک کر دیا ہے۔

بین الاقوامی فوج ایساف کے بیان میں بتایا گیا ہے کہ فوجی اہلکاروں پر یہ حملہ ملک کے جنوب میں واقع ایک فوجی اڈے پر کیا گیا۔

ایساف کا کہنا ہے کہ اتحادی افواج کی جانب سے جوابی کارروائی میں حملہ آور ہلاک کر دیا گیا ہے۔ ہلاک ہونے والے فوجیوں کی قومیت ابھی ظاہر نہیں کی گئی ہے۔

غیر ملکی فوجیوں پر یہ حملہ ایسے وقت کیا گیا جب کچھ دن قبل ایک امریکی فوجی نے فائرنگ کرکے سترہ افغان شہریوں کو قتل کر دیا تھا۔

افغانستان کی وزارتِ دفاع کے ایک اہلکار نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ یہ واقعہ ہلمند صوبے میں پیش آیا اور حملہ آور افغان فوج کا اہلکار تھا۔

ادھر صوبہ قندھار میں سترہ افغان شہریوں کو ہلاک کر نے والے اڑتیس سالہ سارجنٹ رابرٹ بیلز پر امریکہ میں قتل کے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

الزامات ثابت ہونے پر انہیں سزائے موت ہوسکتی ہے۔

امریکی فوجی کی جانب سے افغان شہریوں کے قتل کے بعد طالبان نے بھی امریکہ کے ساتھ جاری مزاکرات معطل کر دیئے تھے۔

اسی بارے میں